سابق سینیٹر گلزاراحمدکے بیٹے کےخلاف دائردرخواستوںپر وضاحت طلب

سابق سینیٹر گلزاراحمدکے بیٹے کےخلاف دائردرخواستوںپر وضاحت طلب

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائی کورٹ کے جسٹس علی باقر نجفی کی سربراہی میں قائم دو رکنی بنچ نے پاک عرب ہاﺅسنگ سوسائٹی کے مالک سابق سینیٹر گلزاراحمدکے بیٹے عمار احمد کے خلاف دائردرخواستوں پرعمار احمد سے 17 جون تک وضاحت طلب کر لی ہے۔زاہدہ نسیم سمیت دیگر متاثرین درخواست گزاروں کی جانب سے موقف اختیار کیا گیاہے کہ پاک عرب ہاﺅسنگ سوسائٹی سیکٹر ایف تھری میں ساڑھے 16لاکھ روپے میں 3 مرلہ کے پلاٹ خریدے، پلاٹوں کی قیمت وصول کرنے کے باوجود عمار احمدنے پلاٹ نہیں دیئے، ایک ہی جگہ دکھا کر ہزاروں لوگوں سے فراڈ کرنے پر نیب نے عمار احمدکو گرفتار کیا،عدالت عالیہ نے 6 ماہ میں پلاٹ یا رقم واپس کرنے کے حلف پر عمار احمد کی ضمانت منظور کی،اب سابق سینیٹر گلزار کے بیٹے عمار نے نہ ہی پیسے واپس کئے ہیںاور نہ ہی انہیںپلاٹ دیئے جارہے ہیں،ڈی جی نیب بھی عدالت میں دئیے گئے بیان حلفی پر عمل درآمد کروانے میں ناکام رہے ہیں،درخواست گزاروں کی رقم واپس نہ کرنے پر سوسائٹی کے مالک عمار احمد کے خلاف کارروائی عمل میں لائی جائے،درخواست گزاروںکا موقف ہے کہ پاک عرب ہاﺅسنگ سوسائٹی کا مالک عمار احمدہائیکورٹ میں دئیے گئے بیان حلفی سے منحرف ہوگیاہے۔

مزید :

علاقائی -