ڈی جی اینٹی کرپشن پنجاب اعجاز حسین شاہ کی تعیناتی کے خلاف دائر درخواست پروکیل کو ترمیمی درخواست دائر کرنے کی ہدایت

ڈی جی اینٹی کرپشن پنجاب اعجاز حسین شاہ کی تعیناتی کے خلاف دائر درخواست ...

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائی کورٹ نے ڈی جی اینٹی کرپشن پنجاب اعجاز حسین شاہ کی تعیناتی کے خلاف دائر درخواست پروکیل کو ترمیمی درخواست دائر کرنے کی ہدایت کردی ۔سینئر ترین جج جسٹس مامون رشید شیخ نے ڈی جی اینٹی کرپشن کے خلاف کیس کی سماعت شروع کی تودرخواست گزار محمد زاہد مغل نے موقف اختیار کیا کہ قانون کے مطابق پی ایم ایس اور ڈی ایم جی افسر ہی ڈی جی اینٹی کرپشن کے عہدے پرتعینات ہوسکتا ،ڈی جی اینٹی کرپشن اعجاز حسین شاہ کو پی ایم ایس اور ڈی ایم جی افسر نہ ہونے کے باوجود غیرقانونی طور پر تعینات کیا گیا،اعجاز حسین شاہ کی بطور ڈی جی انٹی کرپشن تعیناتی عدالتی فیصلوں سے بھی متصادم ہے،ڈی جی اینٹی کرپشن کی تعیناتی کالعدم قرار دی جائے۔

، عدالت نے استفسار کیا کہ گورنر پنجاب کو اس کیس میں کیوں فریق بنایا گیا ہے؟ درخواست گزار نے کہا کہ گورنر پنجاب نے تعیناتی کی حتمی منظوری دی ہے ، عدالت نے مزیدریمارکس دئیے کہ نوٹیفکیشن پنجاب حکومت کی طرف سے جاری کیا گیا ،گورنر کو فریق بنانا فیشن بن چکا ہے، عدالت نے درخواست واپس کرتے ہوئے درخواست گزار کو اس میں ترمیم کرنے کی اجازت دے دی۔

مزید :

علاقائی -