ماسکو ،طالبان کا امن مذاکرات میں افغان حکومت سے غیر ملکی افواج کے انخلاءکا مطالبہ

ماسکو ،طالبان کا امن مذاکرات میں افغان حکومت سے غیر ملکی افواج کے انخلاءکا ...

  

کابل /ماسکو (این این آئی ) ماسکو میںطالبان کے نمائندوں نے اپنے سابقہ موقف پر اصرار کرتے ہوئے کہاہے کہ افغانستان میں امن کے قیام کےلئے یہ اہم ترین ہے کہ تمام غیر ملکی افواج ملک سے نکل جائیں، اسلامی امارت امن کی خواہشمند ہے لیکن اس سلسلے میں پہلا مرحلہ رکاوٹوں کا خاتمہ ہے،ادھر افغان حکومت کی اعلیٰ اختیاراتی امن کونسل کے سربراہ محمد کریم خلیلی نے کہاہے کہ روزانہ کی بنیاد پر افغان شہری عسکریت پسندوں کے حملوں میں ہلاک ہو رہے ہیں لہٰذا اس خون خرابے کی صورت حال کے خاتمے کےلئے ایک باوقار اور انصاف پر مبنی طریقہ کار کو اپنانا ضروری ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق روسی دارالحکومت ماسکو میں گزشتہ روز طالبان نمائندوں اور افغان سیاستدانوں کے ایک گروپ کے درمیان مذاکرات ہوئے۔ اس میٹنگ میں افغانستان میں قیام امن کی امکانات پر بات چیت کی گئی۔طالبان کے نمائندوں کے وفد کی قیادت مذاکرات کار اعلیٰ ملا عبدالغنی برادر کر رہے تھے۔ ا±ن کی قیادت میں طالبان کے وفد نے افغان سیاستدانوں کے ا±س گروپ کے ساتھ ملاقات کی جس میں سینئر علاقائی رہنما اور وہ امیدوار بھی شامل تھے، جنہوں نے اشرف غنی کی صدارت کو اگلے صدارتی الیکشن میں چیلنج کر رکھا ہے۔ مبصرین کے مطابق طالبان کے ایک سینئر لیڈر کا پیغام ٹیلی وژن پر نشر کرنا ایک دلیرانہ اقدام قرار دیا جا سکتا ہے کیونکہ افغانستان کے طول و عرض میں طالبان اپنی مثبت شناخت کے متمنی ہیں۔

افغان امن مذاکرات 

مزید :

صفحہ اول -