کیونکہ عوام کو راحت اور بچوں سے بداخلاقی کے مجرموں کو سرعام پھانسی دی جانا چاہیے، مسرت جمشید

کیونکہ عوام کو راحت اور بچوں سے بداخلاقی کے مجرموں کو سرعام پھانسی دی جانا ...

  

لاہور(لیڈی رپورٹر )بچوں سے زیادتی کے مجرمان کو پھانسی کے بعد چوبیس گھنٹوں کے لیے سر عام لٹکائے جانے کے مطالبے کی قرارداد پنجاب اسمبلی سیکرٹریٹ میں جمع کر ادی گئی ۔تحریک انصاف کی رکن اسمبلی مسرت جمشید چیمہ کی جانب سے جمع کرائی گئی قرارداد کے متن میں کہا گیا ہے کہ پاکستان بھر میں معصوم بچوں اور بچیوں سے زیادتی اور زیادتی کے بعد قتل کے واقعات میں آئے روز اضافہ ہو رہا ہے۔اسلام آباد میں معصوم فرشتہ کو زیادتی کے بعد قتل کرنے کا واقعہ بھی پاکستانی عوام کےلئے انتہائی تکلیف دہ اور اذیت کا باعث ہے۔ بچوں اور بچیوں سے زیادتی اور قتل جیسے گھناﺅنے واقعات کی مکمل روک تھام کے لئے وفاقی حکومت کو سخت سے سخت قوانین بنانے چاہئیںاورایسے افراد کو عبرت کا نشان بنانے کے لئے ان کی لاشوں کو چوبیس گھنٹے چوک چوراہوں میں لٹکائے رکھا جائے۔مطالبہ ہے کہ اس حوالے سے سے جلد از جلد قانون سازی کی جائے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -