پنجاب سندھ، ٹڈی دل حملے میں ہزاروں ایکڑ پر کھڑی فصلین تباہ، امریکی ادار ے کی وارننگ جاری

  پنجاب سندھ، ٹڈی دل حملے میں ہزاروں ایکڑ پر کھڑی فصلین تباہ، امریکی ادار ے ...

  

لاہور/کراچی/واشنگٹن(آئی این پی) پنجاب اور سندھ میں ٹڈی دل کے حملے میں ہزاروں ایکڑ پر کھڑی فصلیں تباہ ہو گئیں۔تفصیلات کے مطابق پنجاب اور سندھ میں ٹڈیاں بے قابو ہوگئی ہیں، دنیا پور، کوٹ مٹھن، کہروڑ پکا اور میلسی میں گندم اور کپاس کی فصلیں شدید متاثر ہوگئیں۔ترجمان نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی(این ڈی ایم اے)کے مطابق بلوچستان میں 31، خیبر پختونخوامیں 11، پنجاب میں 12 اور سندھ میں 7 اضلاع ٹڈیوں کے حملے سے متاثر ہوئے ہیں۔ترجمان این ڈی ایم اے کا کہنا تھا کہ ٹڈیوں کے خاتمے کیلئے مختلف اضلاع کے 3ہزار 600 ہیکٹر رقبے پرسپرے کیا گیا۔دوسری جانب امریکی ادارے فوڈ اینڈ ایگری کلچر آرگنائزیشن نے خبردارکیا ہے کہ پاکستان میں بارش کے بعد ٹڈیوں کے حملے میں تیز تر اضافہ ہوسکتا ہے، تیز بارش ٹڈیوں کی افزائش کے لیے سازگار ماحول پیدا کرتی ہے،نرم زمین پر ٹڈیاں ایک سکوائر میٹر میں 1000انڈے دے سکتی ہیں اور ایک ٹڈا یومیہ 2گرام خوراک کھاسکتاہے۔ بین الاقوامی میڈیا کے مطابق ٹڈیوں کے حملوں سے پریشان کسانوں کیلئے پاکستان میں بارشوں کی پیشگوئی نے خطرے کی نئی گھنٹی بجادی۔امریکی ادارے فوڈ اینڈ ایگری کلچر آرگنائزیشن کی رپورٹ کے مطابق درمیانے درجے کا ایک غول یومیہ 35 ہزار افراد کی خوراک چٹ کرسکتا ہے اور کروڑوں ٹڈیوں کا غول ہوا کے رخ پر یومیہ 150کلومیٹر سفر طے کر سکتا ہے۔ فوڈ ایگری کلچر آرگنائزیشن نے حکومت پاکستان پر زور دیاکہ موسلادھاربارش کے بعد سروے اور ایکشن پلان پر فوری عمل کریں۔

ٹڈی دل حملے

مزید :

صفحہ اول -