مائرہ قتل کیس، ڈی این اے میچ کرگیا،2ملزمان کااعتراف جرم

  مائرہ قتل کیس، ڈی این اے میچ کرگیا،2ملزمان کااعتراف جرم

  

لاہور (کرائم رپورٹر)مائرہ قتل کیس کا معمہ حل ہونے کے قریب پہنچ گیا، قتل کے دوران مزاحمت نے قاتل بے نقاب کردیئے۔پولیس ذرائع کے مطابق مائرہ کو دو افراد نے مل کر قتل کیا ہے۔ ایک ملزم نے مائرہ کے گلے میں ازار بند کا پھندا بنا کر ڈالا،ملزمان نے پلاسٹک کے دستانے بھی پہن رکھے تھے، ذرائع کے مطابق مزاحمت کے دوران مقتولہ مائرہ نے ملزمان کے جسم پر ناخن بھی مارے اور اس بات کی تصدیق مقتولہ ماہرہ کے ناخنوں سے دو افراد کے ملنے والے ڈی این اے سے ہوئی ہے۔مائرہ کو جس ازار بند سے پھندا دیا گیا اس سے بھی قاتل کا ڈی این اے پروفائل ملا ہے، کرائم سین سے پلاسٹک کا دستانہ اہم ثبوت کے طور پر سامنے آ یا ہے۔ ذرائع کے مطابق ایک دستانہ پھٹا ہو اتھا اور اس پھٹے دستانے سے بھی قاتل کا ڈی این اے برآمد ہوا ہے۔ پولیس کے ایک اعلیٰ افسرنے بتایا ہے کہ ملزم ظاہر جدون اور ملزم محمد وسیم نے قتل کا اعتراف کیا ہے اورمزید تفتیش جاری ہے

مائرہ قتل کیس

مزید :

صفحہ آخر -