سپر والا پل کی تعمیر خواب، سیاستدان نعرے لگا کر غائب

سپر والا پل کی تعمیر خواب، سیاستدان نعرے لگا کر غائب

  

مظفرگڑھ (نامہ نگار)  مظفرگڑھ کی تحصیل کوٹ ادو میں ہیڈ تونسہ بیراج کے مغربی کنارے پر ہاکی والا سپر بند کو 5 مواضعات سے ملانے والا پل 2010 کے سیلاب میں مکمل طور پر ٹوٹ گیا تھا جو اب ایک دہائی گزر جانے پر بھی دوبارہ تعمیر نہیں ہو سکا،خادم حسین،کریم بخش،اللہ داد،اللہ دتہ،مہر رجب اور متعدد دیگر اہالیان علاقہ نے بتایا کہ مزکورہ پل ہاکی والا سپر بند کو (بقیہ نمبر11صفحہ6پر)

5 مواضعات موضع بھت والی،موضع لومڑ والی، موضع چھجڑے والا، موضع نشان والا اور موضع خادم والا کے ساتھ ملاتا تھا اور آمدورفت کا واحد زریعہ تھا 2010 کے سیلاب میں یہ آدھا پل سیلاب کے پانی میں بہہ گیا تھا اور اب ایک دہائی گزر جانے پر بھی دوبارہ تعمیر نہیں کیا گیا انہوں نے کہا کہ پل نہ ہونے کی وجہ سے 5 مواضعات کے ہزاروں رہائشی سخت تکلیف میں مبتلا ہیں بچوں کو اسکول آنے جانے کیلئے گھنٹوں کشتی کا انتطار کرنا پڑتا  ہے مریضوں کو ہسپتال پینچانے کیلئے بھی گھنٹوں کشتی کا انتظار کرنا پڑتا ہے اکثر مریض وقت پر کشتی نہ ملنے سے جان کی بازی ہار جاتے ہیں انہوں نے کہا کہ انہیں تحریک انصاف کی حکومت سے بہت توقع تھی کہ یہ حکومت عوام کے مسائل حل کرنے میں دلچسپی رکھتی ہے لیکن ان کی امیدیں نقش بر آب ثابت ہوئی ہیں اور کسی نے ان کی تکلیف دور کرنے کے بارے میں سوچا تک نہیں انہوں نے وزیر اعظم عمران خان اور وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان بزدار سے 5 مواضعات کے ہزاروں رہائشیوں طالب علموں اور مریضوں کی مشکلات دور کرنے کیلئے فوری طور پر پل تعمیر کرانے کا مطالبہ کیا ہے۔

غائب

مزید :

ملتان صفحہ آخر -