لادی گینگ کیخلاف آپریشن، ڈاکوؤں کی کمین گاہیں ندزآتش مورچے تباہ 

لادی گینگ کیخلاف آپریشن، ڈاکوؤں کی کمین گاہیں ندزآتش مورچے تباہ 

  

ڈیرہ،چوٹی زیریں، کوٹ مبارک(سٹی رپورٹر، نمائندہ خصوصی)  لادی گینگ کے خلاف تاریخ کا سب سے بڑا آپریشن، دوران آپریشن پولیس اور لادی گینگ کے ممبران کے درمیان کراس فائرنگ، لادی گینگ کی کمین گاہیں اور مورچے تباہ۔وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان احمد بزدار، انسپکٹر جنرل جنرل آف پولیس پنجاب انعام غنی کی ہدایت پر ڈی پی او عمر سعید ملک نے ڈپٹی کمشنر محمد علی اعجاز، پولیٹکل اسسٹنٹ حمزہ سالک، رینجرز، BMP پولیس اور دیگر اداروں کے ہمراہ لادی گینگ کے خلاف تاریخ کا سب سے بڑا آپریشن کیا گیا لادی گینگ اور پولیس کے درمیان کراس فائرنگ، لادی گینگ کے ممبران اپنے مورچے اور کمین گاہیں چھوڑ کر فرار ہو گئے جبکہ کچھ مشکوک افراد کو پولیس نے زیر حراست لیکر تفتیش شروع کر دی۔ سرچ آپریشن میں ضلع پولیس کے ہمراہ قانون نافذ کرنے والے اداروں سمیت 600 سے زائد جوانوں نے شرکت کی بلٹ بروف اور بکتر بند گاڑیوں سے آگے بڑھتے ہوئے پولیس نے لادی گینگ کے 8 گھر اور مورچے تباہ کر دئے جبکہ لادی گینگ کے ممبران خوف سے بھاگ گئے۔ ڈی پی او عمر سعید ملک تمام تر آپریشن کی خود نگرانی کرتے رہے ضلع پولیس قانون نافذ کرنے والے اداروں کے ہمراہ بھاری اسلحہ APC  گاڑی کے ہمراہ لادی گینگ کے مورچوں تک پہنچ گئی تھی لادی گینگ کے ممبران اپنے مورچے چھوڑ کر فرار ہو گئے ڈی پی او عمر سعید ملک نے کہا کہ معاشرے کا امن ہرگز تباہ نہیں کرنے دیں گے عوام الناس کے تحفظ کو یقینی بناتے ہوئے لادی گینگ کے مذموم عزائم کو ناکام بنائیں گے اور ان کی تباہی تک تمام وسائل بروئے کار لائے جا رہے ہیں۔دوسری جانب سیکورٹی فورسز نے لادی گینگ کے ٹھکانوں کو سرچ آپریشن کے بعد ہیوی مشینری کے ذریعے مسمار کردیا اور عارضی پناہ گاہوں کو آگ بھی لگادی جرائم پیشہ عناصر کیخلاف سرچ آپریشن کے دوران سیمنٹ فیکٹری اور کوٹ مبارک کے علاقوں سے متعدد مشتبہ افراد کو حراست میں لے لیا گیا ہے دوسری طرف ذرائع کے مطابق لادی گینگ سے تعلق رکھنے والے ایک رکن جمیل ممدانی نے سرنڈر کر تے ہو ئے خود کو قانون کے حوالے کر دیا اس کے دیگر ساتھیوں کی گرفتاری کے لئے پولیس تفتیش کر رہی ہے۔علاوہ ازیں آر پی او فیصل رانا کا وزیر اعظم عمران خان اور وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان بزدار کے ڈاکووں کے خلاف اعلان کردہ آپریشن پر مکمل فوکس،قانون نافذ کرنے والے اداروں کے مشترکہ آپریشن کو کامیابی سے ہمکنار ہونا ہے اس کے لئے ہر قانونی راستہ اختیار کر سکتے ہیں،لادیوں کے خلاف قانونی منادی ہو چکی، اب ہر قانون شکن لادی کی کرتوتوں کی وجہ سے قانون کے تحت بربادی ہو گی جس سے قانون شکنوں سے آزادی ہو گی،ان خیالات  کا اظہار ریجنل پولیس آفیسر ڈی آئی جی محمد فیصل رانا نے ڈاکووں،قاتلوں کے خلاف آپریشن میں صف اول کی مانیٹرنگ کرتے ہوئے کیا،آر پی او فیصل رانا نے کہا کہ قبائلی علاقوں میں لادی گینگ نے ظلم و بربریت کی انتہا کر دی،ان سماج دشمنوں نے جو،،ات چکی،،ہوئی تھی اس کے بعدازاں وزیراعظم پاکستان  عمران خان کے اعلان،وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان بزدار کے احکامات اور آئی جی پنجاب انعام غنی کی ہدایات پر شروع ہونے والے آپریشن میں ہر اس قانونی اقدام کے فوری طور پر اٹھائے جانے کی منظوری دی گئی جس سے آپریشن کی کامیابیوں کا لا متناہی سلسلہ شروع ہو جائے،آر پی او فیصل رانا نے کہا کہ میرے سمیت  آپریشن میں شامل ریاست کی تمام۔فورسز کے اعلی افسران اپنے ہر جوان اور آفیسر کے ساتھ ہی نہیں بلکہ ان کے آگے کھڑے ہیں،آر پی او فیصل رانا نے کہا کہ قانون سے زیادہ طاقت تو کسی کی ہے نہیں،اس آپریشن میں قانون کی طاقت کے مکمل استعمال سے یہ علاقہ  نہ صرف امن و امان کی قیام گاہ بن جائے گا بلکہ اس آپریشن کو ہر قسم کا قانون شکن نشان عبرت کے طور پر یاد رکھے گا،آر پی او فیصل رانا نے کہا کہ قانون پسند طبقات کی پشت پناہی اس آپریشن کی کامیابی کہ مکمل ضمانت ہے۔

لادی گینگ

مزید :

صفحہ اول -