"ایہدا اٹھو گا جوانی چے جنازہ مِٹھیے" کیا سدھو نے 14 دن پہلے اپنے قتل کی پیشگوئی کی؟ دی لاسٹ رائڈ گانا وائرل ہوگیا

"ایہدا اٹھو گا جوانی چے جنازہ مِٹھیے" کیا سدھو نے 14 دن پہلے اپنے قتل کی ...
سورس: Instagram

  

چندی گڑھ (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارت کے پنجابی گلوکار سدھو موسے والا کو قتل کردیا گیا ہے، انہوں نے آج سے ٹھیک دو ہفتے قبل 15 مئی کو "دی لاسٹ رائڈ" کے نام سے ایک گانا ریلیز کیا تھا جو ان کے قتل کے بعد وائرل ہوگیا ہے۔

سدھو موسے والا  کے 14 روز قبل ریلیز ہونے والے گانے کے بول " چوبر دے چہرے اتے نور دسدا، ایہدا اٹھو گا جوانی چے جنازہ مِٹھیے" (جوان کے چہرے کا نور بتا رہا ہے ، اس کا جوانی میں ہی جنازہ اٹھے گا) تیزی سے وائرل ہو رہے ہیں۔  اس گانے کو یوٹیوب پر اب تک  94 لاکھ 26 ہزار لوگ دیکھ چکے ہیں۔ سدھو کے قتل کے بعد ان کا یہ گانا سوشل میڈیا پر بڑی تعداد میں شیئر کیا جا رہا ہے۔ اس گانے کی خاص بات یہ بھی ہے کہ سدھو موسے والا نے اسے اپنی والدہ کی سالگرہ کے موقع پر ریلیز کیا تھا، گانے کے آخر میں انہوں نے اپنی والدہ کو سالگرہ کی مبارکباد بھی دی ہے۔

خیال رہے کہ پنجابی گلوکار سدھو موسے والا کو ضلع مانسا کے گاؤں جواہر کے میں قتل کیا گیا ہے، گزشتہ روز پنجاب کی ریاستی حکومت نے ان سمیت 420 افراد کی سیکیورٹی ہٹائی تھی۔ سدھو موسے والا پر 30 گولیاں چلائی گئیں جس کے نتیجے میں ان کے ساتھ موجود دیگر دو افراد زخمی ہوئے ہیں۔ فائرنگ کے بعد سدھو کو فوری طور پر مانسا کے سول ہسپتال لے جایا گیا لیکن وہ راستے میں ہی دم توڑ چکے تھے۔

یہاں یہ بھی یاد رہے کہ 29 سالہ گلوکار نے حالیہ ریاستی انتخابات میں کانگریس کے ٹکٹ پر مانسا کی نشست سے الیکشن لڑا تھا تاہم وہ  عام آدمی پارٹی کے ایک ایسے شخص سے الیکشن ہار گئے تھے جس کو کچھ روز پہلے ان کی اپنی ہی پارٹی نے کرپشن کے الزامات پر کابینہ سے بے دخل کیا ہے۔

مزید :

تفریح -