ربیع کی فصل کیلئے قرض کی شرح 30ہزار کردی گئی‘مخدوم ہاشم بخت

ربیع کی فصل کیلئے قرض کی شرح 30ہزار کردی گئی‘مخدوم ہاشم بخت

  



لاہور( اپنے نمائندے سے) ای کریڈٹ سکیم کے تحت ربیع کی فصلوں کے لیے قرض کا سائز 25سے بڑھا کر 30ہزار کیا جا رہا ہے۔ کسانوں کو قرض ان کی زرعی ضروریات کے مطابق موزوں وقت پرمہیا کیا جائے گا۔ قسطوں کی تعداد قرض کے سائز کے مطابق مقرر کی جائے گی۔ قرض کی فراہمی کو ریگولر بنیادوں پر یقینی بنایا جائے گا۔ کیپ( CAPP ) کے ذریعے معلومات کا حصول صرف قرض لینے والے کسانوں تک محدود نہیں رکھا جائے گا بلکہ کوئی بھی کاشت کار کہیں بھی اپلیکیشن سے استفادہ کر سکے گا۔ان خیالات کا اظہار صوبائی وزیر خزانہ مخدوم ہاشم بخت نے آج ایگریکلچر ای کریڈٹ سکیم کی سٹیرنگ کمیٹی کے سترہویں اجلاس کی صدارت کے دوران کیا۔ صوبائی وزیر نے کہا کہ موجودہ دور میں زراعت صنعت کا درجہ حاصل کر چکی ہے دیگر صنعتی شعبوں کی طرح زراعت میں ڈیجیٹل لائزیشن بہی وقت کی اہم ضرورت ہے۔ قرض کے حصول اور خرید و فروخت کے معاملات کے لیے موبائل وائلٹ نسبتاً آسان اور محفوظ راستہ ہیں۔ کسانوں کو معلومات کی فراہمی کے لیے مزید ایپس متعارف کروائی جائیں گی۔ اس ضمن میں جہاں مزید بنکوں اور ٹیلی کمیونیکیشن کمپنیوں کو سکیم میں شامل کیا جائے گا وہاں کسان بہی انتظامی امور کا حصہ ہوں گے۔

اجلاس کے دیگر شرکاء میں صوبائی وزیر زراعت ،سیکرٹری فنانس شیخ حامد یعقوب ، سیکرٹری ایگریکلچر واصف خورشید، چیف ایگزیکٹو آفیسر اخوت فاؤنڈیشن امجد ثاقب،زرعی ترقیاتی بنک، سٹیٹ بنک، تعمیر بنک ، این آر ایس پی، پنجاب آئی ٹی بورڈ، پنجاب لینڈ ریکارڈ اتھارٹی اور ٹیلی نار کمیونیکشن اینڈ مائیکرو فنانسنگ کے نمائندگان شامل تہے۔ اجلاس کا مقصد صوبائی وزراء کو سکیم سے متعارف کروانا ،قرضوں کی فراہمی کے نئے طریقہ کار سے آگاہی اور مزید کسانوں کی رجسٹریشن کی منظوری لینا تہا۔ ایڈیشنل سیکرٹری پلاننگ نے صوبائی وزراء کو ا یگریکلچر ای کریڈٹ سکیم پر بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ ای کریڈٹ سکیم کے تحت گزشتہ چار سیزنز میں 453,682 روپے کے بلاسود قرض فراہم کیے جا چکے ہیں جبکہ رواں سیزن میں مزید 32.027کے قرض فراہم کیے جا رہے ہیں جن کی ایک قسط جاری کی جا چکی ہے۔ ایڈیشنل سیکرٹری نے اجلاس کو پارٹنر بنکوں کے شےئرز کی تفصیلات سے بھی آگاہ کیا گیا ہے۔

مزید : کامرس


loading...