ضلع راجن پور،اساتذہ تبادلوں میں بڑے پیمانے پر رقم وصول کرنیکا انکشاف

ضلع راجن پور،اساتذہ تبادلوں میں بڑے پیمانے پر رقم وصول کرنیکا انکشاف

  



کوٹلہ نصیر (نامہ نگار) ضلع راجن پور میں اساتذہ تبادلوں میں بھاری رشوت وصول(بقیہ نمبر38صفحہ12پر )

کئے جا نے کاانکشاف ہوا ہے، چیف آفیسر ایجوکیشن نے چار بار کمیٹی میں موجود آفیسران تبدیل کئے ، سی او کے دست راست فیض اللہ نے بہتی گنگا میں خوب ہاتھ دھوئے تفصیلات کے مطابق محکمہ تعلیم میں بڑے پیمانے پر تبادلوں میں رشوت کے بدلے ہیر پھیر کی گئی ہے اور کئی حق داروں کی حق تلفی کی گئی ہے سی اوایجوکیشن کی طرف سے پہلے تین آفیسران چوہدری محمد نواز ہیڈ ماسٹر گورنمنٹ بوائز ہائی سکول، مسز نگہت گل ہیڈ مسٹر یس گور نمنٹ گرلز ہائی سکول،عابد شاکر سینئر ہیڈ ماسٹر مہرے والا پر کمیٹی بنائی گئی مگرمن پسند اساتذہ کے تبادلوں کیلئے دوبارہ جلیل بھٹی ہیڈ ماسٹر گور نمنٹ ہائی سکول چک جندوشاہ،محمدعامر سکھیرا ہیڈ ماسٹر گورنمنٹ ہائی سکول فتح پور ،امتیاز رسول ہیڈ ماسٹر گورنمنٹ ہائی سکول کوٹلہ نصیر کمیٹی مقرر کی گئی اس کمیٹی نے جب آفیسران اور کلرک بادشاہوں کی خواہش پوری نہ کی تواسے تبدیل کرتے ہوئے محمدرمضان سینئر ایس ایس فاضل پور،محمد فیاض ہیڈ ماسٹر حضرت والا اور عاصمہ اکرم سینئر ہیڈ مسٹریس گورنمنٹ گرلز ہائی سکول محمد پوردیوان تبدیل کی گئی جب ان سے بھی خواہشات پوری ہونے کی توقع نہ رہی تو محمدعبداللہ ہیڈ ماسٹر گورنمنٹ ہائی سکول کوٹلہ عیسن ،محمدرمضان سینئر ایس ایس فاضل پور ،محمد فیاض ہیڈ ماسٹر گور نمنٹ ہائی سکول حضرت والا مقرر کی گئی آخر ان افسران کو مسترد کرتے ہوئے ڈی ایم او آفس کے سولہویں اسکیل کے ڈیٹاانٹری آپریٹر سلطان دریشک،اے ای او طلحہ ساجد اور اے ای او محمدعثمان پر مشتمل کمیٹی تشکیل دے کر ان کی سفارشات پر 152 مردوخواتین اساتذہ کے تبادلوں کی فہرست جاری کردی گئی شہری حلقوں نے ڈپٹی کمشنر راجن پور سے تبادلوں کے حوالے سے بار بار کمیٹیوں کی تبدیلی اور تبادلوں کے بدلے میں وصول رشوت کی رقم واپس کرانے کا مطالبہ کیا ہے ۔

رقم وصولی

مزید : ملتان صفحہ آخر