قبائلی ضلع خیبر باڑہ کے بیشتراراضی پر قوم آفریدی نے زبردستی قبضہ کررکھا ہے

قبائلی ضلع خیبر باڑہ کے بیشتراراضی پر قوم آفریدی نے زبردستی قبضہ کررکھا ہے

  



پشاور(سٹی رپورٹر)خلیل مہمند عوامی اتحاد کے مشران کا کہنا ہے کہ قبائلی ضلع خیبر باڑہ کے بیشتر اراضی پر قوم آ فر یدی نے زبردستی قبضہ کر رکھا ہے جبکہ زیر تعمیر شاہد آفریدی سٹیڈیم کیلئے 240کنال زمین مختص کئے گئے زمین جس پر بھی ہمارا حق ہے اور انتظامیہ نے بھی ہمارے ساتھ وعدہ کیا تھا کہ مذکورہ زمین کی معاوضہ خلیل مہمند کو دیا جا ئے گا لیکن انتظامیہ نے ہارون رشید آفریدی کو زمین کی 12کروڑ روپے دیدیاانتظامیہ کی ملی بھگت کی وجہ سے حقداروں کو حق سے محروم کر ر کھا ہے ۔گزشتہ روز پشاور پر یس کلب میں خلیل مہمند عوامی اتحاد کے صدر شیخ ظفر اللہ خان ،جنرل سیکرٹری حاجی گلفام خان (سنگو)سینئر نائب صدر ثمین جان (ماشوخیل) ڈپٹی جنرل سیکرٹری ملک فرداد خان (سنگو)اور دیگر کے ہمراہ پر یس کانفر نس کر رہے تھے ،ان کا کہنا تھا کہ موضع شیخان کے شاملات دیہہ کے بار ے میں عدالت سے حکم امتناعی ہو چکا ہے لیکن اس کے باوجود اکاخیل آفریدی قوم اب بھی اس پر تعمیرات کر رہی ہے جس کو فی الفور بند کیا جا ئے۔انہوں نے کہاکہ ڈیٹورنگ روڈ میں موضع سنگو کا 107کنال اورتین مرلی زمین آگئی ہے اس پر پہلے سے سیکشن فور کیا جا چکا ہے لیکن ابھی تک اس پر کوئی عمل درآمد نہیں ہوا ۔انہوں نے الزام عائد کیا کہ ایم این اے اقبال آفرید ی کھلے عام مداخلت کر ر ہے ہیں اور قوم اکا خیل آفریدی کو ورغلا ر ہے ہیں کیونکہ اگر علاقے میں کسی بھی ناخوشگوار واقعہ رونما ہوا تو اس کہ ذمہ دار ایم این اے ہو گا ۔انہوں نے کہاکہ خیل مہمند کے ساتھ سوتیلی ماں جیسا سلوک بند کیا جا ئے اور ہمیں ہمارا حق د یا جا ئے ۔انہوں نے وزیراعظم عمران خان،وزیراعلیٰ محمود خان ،گورنر شاہ فرمان اور کور کمانڈر پشاور سے اپیل کی ہے ان کی زمین کو آفریدی قبائل سے واگزار کیا جائے انہوں نے دھمکی دی کہ اگر ہمارے ساتھ استحصال بند نہ کیا گیا تو پشاور کے اطراف کا گھیرؤا کرکے تمام داخلی و خارجی راستے بند کر د ینگے جس کی تمام تر ذمہ داری متعلقہ حکام پر ہو گی۔

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...