” نواز شریف بظاہر سادہ اور بھولے بھالے لگتے ہیں لیکن۔۔۔“سینئر صحافی سہیل وڑائچ نے ایسی بات کہہ دی کہ سن کر عمران خان سوچ میں پڑ جائیں گے

” نواز شریف بظاہر سادہ اور بھولے بھالے لگتے ہیں لیکن۔۔۔“سینئر صحافی سہیل ...
” نواز شریف بظاہر سادہ اور بھولے بھالے لگتے ہیں لیکن۔۔۔“سینئر صحافی سہیل وڑائچ نے ایسی بات کہہ دی کہ سن کر عمران خان سوچ میں پڑ جائیں گے

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )سینئر صحافی سہیل وڑائچ نے آج ” نوازشریف خاموش کیوں “ کے عنوان سے کالم لکھا ہے جس میں انہوں نے حالات حاظرہ کو سامنے رکھتے ہوئے سابق وزیراعظم کی خاموشی کی مختلف وجوہات بیان کیں جن میں سے ممکنہ طور پر وہ کسی ایک وجہ سے تاحال چپ بیٹھے ہیں اور عدالتوں میں مقدمات کا سامنا کر رہے ہیں ۔

سہیل وڑائچ کا اپنے کالم میں کہناتھا کہ نوازشریف کی شخصیت اور ماضی کے فیصلوں کا مطالعہ کر کے پتا چلتی ہے۔ نواز شریف بظاہر سادہ اور بھولے بھالے لگتے ہیں لیکن وہ بہت گہرے آدمی ہیں، ان سے دل کی بات نکلوانا بہت مشکل ہے، وہ کسی بھی معاملے پر فوری فیصلہ نہیں کرتے، بہت سوچتے ہیں پھر کہیں جاکر فیصلہ کرتے ہیں، چینی فلاسفر سن زو کی فلاسفی کے مطابق خاموشی ہمیشہ سے ان کا ہتھیار رہا ہے، وہ اپنی خاموشی کو سیاسی حکمت کاری کے لئے استعمال کرتے رہے ہیں، وہ بہت سارے ایشوز اور شخصیات کے بارے میں اپنے خیالات کا اظہار نہیں کرتے۔ اپنے آخری دورِ حکومت میں اسٹیبلشمنٹ سے اپنے اختلافات کی خبر کو انہوں نے ہوا تک لگنے نہیں دی۔ جدہ میں جلا وطنی کا معاہدہ انہوں نے مکمل اخفا میں رکھا اور کئی سال تک اسے چھپائے رکھنے میں کامیاب رہے۔ اب بھی ان کی خاموشی کے پیچھے حکمتِ عملی کا کوئی طوفان چھپا ہو سکتا ہے۔

سہیل وڑائچ کا اپنے کالم میں کہناتھاکہ ایسا لگتا ہے کہ پاکستانی سیاست ایک نئے مرحلے میں داخل ہونے والی ہے۔ دیکھنا یہ ہوگا کہ اس مرحلے میں شریف اور زرداری موجود رہیں گے یا فارغ ہو جائیں گے۔ فرض کریں فارغ ہو جائیں گے تو ان کی جگہ متبادل اپوزیشن کون ہو گی، یوں لگ رہا ہے کہ اگر ایسا ہوا تو پھر نئی اپوزیشن تحریک انصاف کے اندر ہی سے پیدا کی جائے گی۔ تحریک انصاف میں سے پسندیدہ اور قابل لوگوں کو ہی اگلے ممکنہ سیٹ اَپ کے لئے استعمال کیا جائے گا۔ دوسری طرف اگر شریف اور زرداری کسی نہ کسی طرح اس مشکل وقت کو ٹالنے میں کامیاب ہو جاتے ہیں تو پھر دو تین سال میں جو کچھ کیا گیا وہ سب ہوا ہو جائے گا اور تبدیلی کی جن ہواﺅں کا وعدہ کیا گیا تھا ان پر سے لوگوں کا ہمیشہ ہمیشہ کے لئے اعتبار اٹھ جائے گا۔

مزید : قومی


loading...