کشمیر پر نئی بھارتی پالیسی اسرائیلی نظیرے کی عکاسی کررہی ہے، خاور علی شاہ

        کشمیر پر نئی بھارتی پالیسی اسرائیلی نظیرے کی عکاسی کررہی ہے، خاور علی ...

  



کبیر والا(تحصیل رپورٹر)بھارت کشمیری مسلمانوں کی اکثریت کو اقلیت میں بدلنے کے مکروہ منصوبے پر عمل پیرا ہے، مقبوضہ کشمیر پر نئی بھارتی پالیسی اسرائیلی نظریے کی عکاسی کررہی ہے، اپوزیشن کی احتجاجی تحریک نے آزادی کشمیر کی تحریک پر منفی اثرات مرتب کئے،کشمیر پالیسی پراپوزیشن کو حکو مت کی حمائت کے لئے آگے آنا ہوگا، کشمیریوں کو حق رائے دہی دئے بغیر خطے میں قیام امن کا خواب پورا نہیں ہوسکے گا، بھارت کشمیر میں انسانی حقوق کی بدترین پامالیوں کامرتکب ہورہا ہے، کشمیریوں کو اقوام متحدہ کی(بقیہ نمبر34صفحہ12پر)

قرادادو ں کے مطابق حق خود ارادیت دینا ہوگا، تاریخ کے کٹھن موڑ پر کشمیریوں کو تنہا نہیں چھوڑ یں گے، پاکستان مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے ہر سطح پر آواز اٹھائے گا، ان خیالا ت کا اظہار سید گروپ کے سربراہ، رکن پنجاب اسمبلی ڈاکٹر سید خاور علی شاہ نے گزشتہ روز میڈیاسے گفتگو کے دوران کیا، انہوں نے کہا کہ بھارت مقبو ضہ کشمیر کو مکمل طور پر”ہڑپ“کر نے کے منصوبے بنا رہا ہے،ا نہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں ہندو بستیوں کے قیا م کے مقصد کشمیری مسلمانوں کی اکثریت کو اقلیت میں بدلنا اور موبوضہ کشمیر میں فلسطین جیسے حالات پیدا کرنے جارہا ہے، انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر پر بھارتی قبضہ واگزار کروانے کے لئے اپوزیشن جماعتوں کو حکو متی اقداما ت کی حمائت میں آگے آنا چاہیئے،انہوں نے مزید کہا کہ بھارتی مسلح افواج نہتے کشمیری عوام کا خون بہانے میں لگی ہو ئی ہے، ا نہو ں نے کہا کہ کشمیری مسلمان تاریخ کی بندترین ریاستی دہشت گردی کا شکا ر ہیں جب کہ اقوام عالم کے کانوں پر جوں تک نہ رینگ رہی ہے، انہوں نے کہا کہ نہتے کشمیریوں کو بھارتی جبر و ستم سے نجات دلانے کے لئے اقوام متحدہ سمیت عالمی اداروں کی منظور شدہ قرار دادوں پرعمل کرنا ہوگا۔

خاور علی شاہ

مزید : ملتان صفحہ آخر