لکھنؤ ٹیسٹ، افغان ٹیم لڑ کھڑانے لگی، دوسری اننگزمیں 7وکٹوں کے نقصان 109رنز

لکھنؤ ٹیسٹ، افغان ٹیم لڑ کھڑانے لگی، دوسری اننگزمیں 7وکٹوں کے نقصان 109رنز

  



لکھنؤ (اے پی پی) افغانستان کی ٹیم پر شکست کے بادل منڈلانے لگے، شمر بروکس کی شاندار سنچری کی بدولت ویسٹ انڈیز ٹیم پہلی اننگز میں 277 رنز بناکر آؤٹ ہوگئی، شمر بروکس 111، کیمپ بیل 55 رنز کے ساتھ نمایاں بلے باز رہے، افغانستان کی طرف سے اپنے کیریئر کی پہلا ٹیسٹ کھیلنے والے امیر حمزہ نے 5، راشد خان نے 3 کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا، افغانستان کی ٹیم نے اپنی دوسری اننگز میں 7 وکٹوں کے نقصان پر 109 رنز بنالئے اور اسکو ویسٹ انڈیز کے خلاف 19 کی مجموعی برتری حاصل ہے جبکہ اسکی 3 وکٹیں باقی ہیں، افغانستان کی طرف سے جاوید احمدی 62 رنز کے ساتھ نمایاں رہے، ویسٹ انڈیز کی طرف سے کورنوال اور چیسی نے تین، تین کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔ میچ کا دوسرا روز باؤلرز کے نام رہا، 15 وکٹیں گریئں۔ جمعرات کو ویسٹ انڈین ٹیم نے اپنی پہلی ادھوری اننگز 68 رنز 2 کھلاڑی آؤٹ پر دوبارہ شروع کی تو کیمپ بیل 30 اور بروکس 19 رنز پر کھیل رہے تھے۔ دونوں کھلاڑیوں کے درمیان تیسری وکٹ پر قیمتی 82 رنز بنے تاہم اس موقع پر کیمپ بیل اپنی نصف سنچری مکمل کرنے کے بعد 55 رنز بناکر امیر حمزہ کی گیند پر احسان اللہ کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوگئے، شمرون ہیٹمائر 13 رنز بناکر راشد خان کی گیند پر ایل بی ڈبلیو آؤٹ ہوگئے، بروکس نے ایک اینڈ پر اپنی عمدہ بلے بازی کا سلسلہ جاری رکھا، روسٹن چیسی پانچویں آؤٹ ہونے والے کھلاڑی تھے جو 2 رنز بناکر ظاہر خان کی گیند پر ابراہیم کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوگئے، شین ڈاؤرچ 42 رنز بناکر ظاہر خان کی گیند پر ایل بی ڈبلیو آؤٹ ہوگئے، کپتان جیسن ہولڈر 11 رنز بناکر امیر حمزہ کی گیند پر وکٹ کیپر افسر کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوگئے، کورنوال آٹھویں آؤٹ ہونے والے کھلاڑی تھے جو 5 رنز بناکر راشد خان کی گیند پر ایل بی ڈبلیو آؤٹ ہوگئے

، اس موقع پر شمر بروکس کی عمدہ اننگز کا بھی خاتمہ ہوگیا اور وہ اپنے کیریئر کی پہلی سنچری مکمل کرنے کے بعد 111 رنز بناکر امیر حمزہ کی گیند پر کلین بولڈ ہوگئے۔ کیماروئچ آخری آؤٹ ہونے والے کھلاڑی تھے جو 3 رنز بناکر امیر حمزہ کی گیند پر ایل بی ڈبلیو آؤٹ ہوگئے۔ واریکن 4 رنز کے ساتھ ناٹ آؤٹ رہے۔ ویسٹ انڈین ٹیم اپنی پہلی اننگز میں 277 رنز بناکر آؤٹ ہوگئی، افغانستان کی طرف سے اپنا ٹیسٹ ڈیبیو کرنے والے امیر حمزہ نے 5، راشد خان نے 3 جبکہ ظاہر خان نے 2 کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔ افغانستان کی ٹیم کی طرف سے دوسری اننگز کا آغاز ابراہیم زدران اور جاوید احمدی نے کیا دونوں کھلاڑیوں نے 53 رنز کا آغاز فراہم کیا تاہم اس کے بعد ساتویں وکٹ تک کوئی بھی کھلاڑی ویسٹ انڈین باؤلرز کا جم کر سامنا نہ کر سکا اور یکے بعد دیگرے پویلین لوٹتے چلے گئے، جاوید احمدی 62 رنز کے ساتھ نمایاں رہے، میچ کے دوسرے روز جب کھیل ختم ہوا تو افغانستان کی ٹیم نے اپنی دوسری اننگز میں 7 وکٹوں کے نقصان پر 109 رنز بنالئے تھے اور اسکو ویسٹ انڈین ٹیم کے خلاف 19 رنز کی برتری حاصل ہے جبکہ اسکی 3 وکٹیں باقی ہیں۔ ویسٹ انڈیز کی طرف سے کورنوال اور چیسی نے تین، تین کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔ 

مزید : کھیل اور کھلاڑی