وزیراعظم کے وژن کے مطابق تعلیم اولین ترجیح ہے: شوکت علی یوسفزئی 

  وزیراعظم کے وژن کے مطابق تعلیم اولین ترجیح ہے: شوکت علی یوسفزئی 

  



پشاور(سٹاف رپورٹر)خیبرپختونخوا کے وزیر اطلاعات وتعلقات عامہ شوکت یوسفزئی نے کہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان کے ویژن کے مطابق تعلیم صوبائی حکومت کی پہلی ترجیح ہے پاکستان تحریک انصاف کے مسلسل چھ بجٹ میں تعلیم سر فہرست ہے جبکہ صحت دوسرے نمبر پر ہے دنیا چاہتی ہے کہ پاکستان تعلیم کے شعبہ میں موجود خامیوں اور پولیو کو ختم کرے لیکن ہم خود آگاہی نہ ہونے کی وجہ سے رکاوٹ بنے ہوئے ہیں۔ موجودہ آبادی کے مقابلے میں تعلیمی اداروں کی تعداد کم ہے لیکن کوشش کر رہے ہیں کہ موجودہ انفراسٹرکچر میں تعلیمی مسائل حل کریں ان خیالات کا اظہار انہوں نے ALIGHT کی طرف سے منعقدہ ایک روزہ سمینار  of School out  children issues, solutions and way forward سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ صوبائی وزیر نے کہا کہ وسائل کا زیادہ حصہ ہیومن ریسورس اور تعلیم پر لگانے سے قومیں بنتی ہیں سابقہ حکومتوں نے بھی تعلیم کے لیے کام کیا ہو گا لیکن ترجیح میں نہیں رکھا ہو گا موجودہ حکومت تعلیمی ایمرجنسی پر کام کر رہی ہے انہوں نے کہا کہ حکومت میرٹ پر مزید اساتذہ بھرتی کر رہی ہے تاکہ سرکاری سکولوں کا معیار بھی مزید بہتر ہو ماضی میں سرکاری سکولوں نے بڑے بڑے لوگ پیدا کیے ہیں تعلیمی معیار اور بچوں کو تعلیم دلانے میں والدین کو آگاہی دینے کی بہت ضرورت ہے تعلیم کی کمی کی وجہ سے لوگ ہمارے حقوق عصب کرتے ہیں جس کی وجہ سے دہشتگردی بھی ہو جاتی ہیں۔انہوں نے کہا کہ حکومت کا پہلا سال مشکل تھا جس میں سخت فیصلے کرنے پڑے پی پی پی اور پی ایم ایل ن کی حکومتوں نے پی آئی اے 375 ارب روپے، گیس 157 ارب روپے اور بجلی کو اربوں روپے خسارے میں چھوڑا ان اداروں کا خسارہ ختم کیے بغیر عوام کو ریلیف دینا نا ممکن تھا۔ آئندہ چند مہینوں میں عوام کو ریلیف ملنا شروع ہو جائے گا دسمبر میں 100 فی صد صحت انصاف کارڈ جاری کر رہے ہیں جس میں تقریبا 7 لاکھ روپے تک کا علاج مفت فراہم کیا جائے گا۔

مزید : صفحہ اول