فحش فلمیں دیکھنے سے آپ کے دماغ میں کیا تبدیلی آتی ہے؟ سائنسدانوں نے انتہائی خطرناک وارننگ دے دی

فحش فلمیں دیکھنے سے آپ کے دماغ میں کیا تبدیلی آتی ہے؟ سائنسدانوں نے انتہائی ...
فحش فلمیں دیکھنے سے آپ کے دماغ میں کیا تبدیلی آتی ہے؟ سائنسدانوں نے انتہائی خطرناک وارننگ دے دی

  



اوٹاوا(مانیٹرنگ ڈیسک) فحش فلموں کا سرطان، کم یا زیادہ، مگر دنیا کے ہر ملک کی نوجوان نسل میں سرایت کر چکا ہے لیکن یہ فلمیں دیکھنے والے شاید یہ نہیں جانتے کہ یہ ان کے دماغ کو کتنا نقصان پہنچاتی ہیں۔ یہ انسان کو اخلاق باختہ تو کرتی ہی ہیں مگر ماہرین کے مطابق ان کے انسان کی ذہنی و جسمانی صحت پر بھی انتہائی مضر اثرات مرتب ہوتے ہیں۔میل آن لائن کے مطابق کینیڈا کی لاویل یونیورسٹی کے پی ایچ ڈی کے طالب علموں نے ریچل این بر نامی طالبہ کی قیادت میں اس معاملے پر تحقیق کی ہے جس کے نتائج میں انہوں نے بتایا ہے کہ فحش فلموں کی لت دماغ کے ’پری فرنٹل کورٹیکس‘ نامی حصے کو تباہ کرکے رکھ دیتی ہے۔ یہ دماغ کا وہ حصہ ہے جو نوجوانی کو پہنچ کر نشوونما پاتا ہے۔

چنانچہ نوجوانی کو پہنچنے سے پہلے ہی اگر فحش فلموں کی لت پڑ جائے تو اس حصے کی نشوونما ٹھیک سے نہیں ہو پاتی۔ یہ حصہ چونکہ موت، قوت ارادی اور نبض کو کنٹرول کرتا ہے چنانچہ اس کے نمو نہ پانے سے انسان کو ناقابل تلافی نقصان پہنچتا ہے اور وہ ایک یکسر مختلف شخص بن کر رہ جاتا ہے اور اس کی تمام ذہنی صلاحیتیں ختم ہو کر رہ جاتی ہیں۔ریچل این بر کا کہنا تھا کہ ”فحش فلمیں دیکھنے سے دماغ میں ’ڈوپامین‘ نامی کیمیکل کا اخراج بہت بڑھ جاتا ہے جو انسان کو سکون پہنچانے والا کیمیکل ہے۔ جب دماغ میں اس کی مقدار زیادہ ہو جائے تو دماغ اس کی مزید مقدار طلب کرتا ہے اور یہ طلب بڑھتی چلی جاتی ہے، چنانچہ انسان انجام کار ڈپریشن جیسے سنگین ذہنی عارضوں کا شکار ہو جاتا ہے۔ “

مزید : ڈیلی بائیٹس