وہ آدمی جس نے قید کے دوران جیل سے بیٹھے بیٹھے لوگوں کو 15کروڑ روپے کا چونا لگا دیا

وہ آدمی جس نے قید کے دوران جیل سے بیٹھے بیٹھے لوگوں کو 15کروڑ روپے کا چونا لگا ...
وہ آدمی جس نے قید کے دوران جیل سے بیٹھے بیٹھے لوگوں کو 15کروڑ روپے کا چونا لگا دیا

  



ابوجہ(مانیٹرنگ ڈیسک) آپ نے فلموں میں دیکھا ہو گا کہ کسی گینگ کا سرغنہ جیل میں بیٹھے باہر وارداتیں کروا رہا ہوتا ہے۔ نائیجیریا میں ایسا حقیقت میں پیش آ گیا ہے جہاں فراڈ کی سزا کاٹنے والے ایک نوسرباز نے جیل میں رہتے ہوئے لوگوں کو مزید 10لاکھ ڈالر (تقریباً ساڑھے 15کروڑ روپے) کا چونا لگا دیا۔ ٹائمز آف انڈیا کے مطابق اس نوسرباز کو کروڑوں روپے کا فراڈ کرنے پر 24سال قید کی سزا سنائی گئی تھی اور اسے نائیجیریا کے شہر لیگوس کی ہائی سکیورٹی جیل میں رکھا گیا تھا لیکن یہ اس جیل میں قید ہوتے ہوئے بھی لوگوں کو اپنا نشانہ بناتا رہا۔

بتایا گیا ہے کہ ہوپ اولسیگن اروک نامی اس نوسرباز نے جیل کے عملے کے کچھ لوگوں کو پیسے کا لالچ دے کر اپنے ساتھ ملا لیا اور ان کی مدد سے قید رہتے ہوئے اپنا دھندہ جاری رکھا۔ یہ واقعہ منظرعام پر آنے کے بعد سے جیل سٹاف کے دو لوگوں کو بھی گرفتار کیا جا چکا ہے جنہوں نے اسے جیل میں انٹرنیٹ اور موبائل فون کی سہولتیں مہیا کیں۔ اس شخص نے صرف نائیجیریا کے لوگوں کو ہی نہیں بلکہ دیگر کئی ممالک کے لوگوں کو بھی دھوکے سے لوٹا۔ یہ شخص انٹرنیٹ پر لوگوں کو بے وقوف بناتا تھا۔جیل حکام کا کہنا ہے کہ ہوپ اولسیگن جیل عملے کو رشوت دے کر ہسپتال جانے کے بہانے اپنے گھر بھی چلا جاتا تھا اور دوستوں سے بھی ملتا رہتا تھا۔ وہ جیل عملے کے ساتھ ہسپتال جاتا اور انہیں وہاں انتظار کرنے کا کہہ کر خود گھر چلا جاتا تھا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس