حکومت آرمی چیف کے تقرر وتوسیع سے متعلق آئینی ترمیم پارلیمنٹ سے منظور کروالے گی، فردوس عاشق اعوان کادعویٰ

حکومت آرمی چیف کے تقرر وتوسیع سے متعلق آئینی ترمیم پارلیمنٹ سے منظور کروالے ...
حکومت آرمی چیف کے تقرر وتوسیع سے متعلق آئینی ترمیم پارلیمنٹ سے منظور کروالے گی، فردوس عاشق اعوان کادعویٰ

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) معاون خصوصی اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے کہاہے کہ آرمی چیف کے حوالے سے آئینی ترمیم پر پارلیمنٹ میں بحث کریں گے اور اس کومنظور بھی کروالیں گے ۔

جیونیوز کے پروگرام ”نیا پاکستان“میں گفتگوکرتے ہوئے فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ حکومت کونااہل کہنے والوں کے اپنے وکلاءنے پانامہ کیس لڑنے میں ناکام ہوکر وزیر اعظم کوجیل بھیج دیا ۔ انہوں نے کہا کہ آرمی چیف کے حوالے سے سپریم کورٹ نے پارلیمنٹ کو مقتدر ادارہ تسلیم کرلیاہے ، اس حوالے سے بھیجی گئی سمری میں کوئی غلطی نہیں تھی ،تمام پروسیجر کوفالوکیاگیا تھا لیکن سپریم کورٹ نے جہا ں خلا ءکی نشاندہی کی وہا ں پر کردیا گیا ۔

فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ آرمی چیف کے حوالے سے آئینی ترمیم کسی کی ذات سے نہیں جڑ ی ، ہم سپریم کورٹ کے ہدایت کے مطابق اس ترمیم پر پارلیمان میں بحث بھی کریں گے اور اس کومنظور بھی کروالیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ ایک سیاسی بیانیہ ہے اور ایک قومی بیانیہ ہے ، سیاستدان ایک دوسرے کے ساتھ پنجہ آزمائی کرتے رہتے ہیں۔ یہ ایک منظم مافیاہے اور اپنے مفادات کے تحفظ کیلئے کسی بھی حد تک جانے کیلئے تیار ہے ۔

مزید : اہم خبریں /قومی