خانہ کعبہ میں سعودی شہریوں اور اقامہ ہولڈرز کیلئے نمازیوں کی تعداد دوگنا کردی گئی

خانہ کعبہ میں سعودی شہریوں اور اقامہ ہولڈرز کیلئے نمازیوں کی تعداد دوگنا ...

  

 لاہور (ڈویلپمنٹ سیل) سعودی عرب میں کورونا کیسوں میں کمی، خانہ کعبہ کی رونقیں بڑھنے لگیں۔ سعودی شہریوں اور اقامہ ہولڈر کے لئے نمازیوں کی تعداد دوگنا کر دی گئی۔خارجی ممالک کیلئے سعودی حکومت محتاط، پاکستان سے عمرہ ویزہ جاری کرنے اور سستا پیکیج دینے کی دوڑ پاکستانی کمپنیوں کے درمیان سوشل میڈیا تک محدود۔ گذشتہ ہفتے لاہور سے جانے والا عمرہ زائرین کا گروپ طے شدہ ہوٹل فراہم نہ کئے جانے کی وجہ سے مشکلات کا شکار، نئے عمرہ ویزہ میں عمرہ سیزن جاری کرنے والی واحد کمپنی مشاعر الحرام بھی بند۔ اب تک پاکستان سے سو سے ڈیڑھ سو افراد نے عمرہ کی سعادت حاصل کی ہے۔ عمرہ نہ ہونے کی وجہ سے عمرہ ٹریڈ کے ساتھ ایئر لائنز کو بھی روزانہ کی بنیاد پر کروڑوں کے نقصان کا سامنا ہے۔ سعودی ذرائع نے دعویٰ کیا ہے کہ کورونا کی صورتِ حال بہتر رہی تو یکم جنوری2021ء سے خارجی ممالک کے لئے محدود عمرہ سعودی عمرہ کمپنیوں کے ذریعے شروع ہو جائے گا۔ کہا گیا ہے سعودی عمرہ کمپنیاں کلیئرنس کے مراحل میں ہیں۔یاد رہے سعودیہ میں عمرہ ان دنوں سعودی شہریوں اور اقامہ ہولڈر کے لئے وزارت داخلہ کی خصوصی ایپ کے ذریعے محدود تعداد میں جاری ہے اور عمرہ کے علاوہ نمازوں کے لئے بھی ایپ میں رجسٹریشن اور اجازت ضروری ہے۔ گزشتہ روز سے نمازیوں کے لئے تعداد روزانہ20ہزار سے بڑھا کر40ہزار کر دی گئی ہے۔ ایپ کے ذریعے اجازت لازمی ہے۔انڈونیشیا، انڈیا، یورپ،امریکہ، مڈل ایسٹ سے پہلے ہی عمرہ بند ہے۔ پاکستان سے20افراد کے حساب سے چند گروپ پورے ملک سے گئے ہیں۔ایک ذرائع کا دعویٰ ہے100 افراد اب تک گئے ہیں دوسرے ذرائع نے دعویٰ کیا ہے کہ پاکستان سے جانے والوں کی تعداد ڈیڑھ سو سے دو سو ہے۔پاکستان سے اب عمرہ مکمل بند ہونے کی بھی ذرائع تصدیق کر رہے ہیں، بڑی کمپنیوں کی طرف سے سستے عمرہ پیکیج دینے کا سلسلہ بھی جاری ہے، بڑے عمرہ گروپ یکم جنوری2021ء سے عمرہ بڑے پیمانے پر شروع ہونے کے لئے پُرامید ہیں،کیونکہ ان دنوں ڈھائی لاکھ سے3 لاکھ عمرہ پیکیج ہونے کی وجہ سے کوئی عمرہ پر جانے کے لئے تیار نہیں ہو رہا۔

عمرہ

مزید :

صفحہ آخر -