"اس چیز سے بڑا کوئی عذاب نہیں ہوتا" عمران خان نے نشاندہی کردی

"اس چیز سے بڑا کوئی عذاب نہیں ہوتا" عمران خان نے نشاندہی کردی

  

جہلم ( ڈیلی پاکستان آن لائن ) وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ ملک میں میرٹ کا نظام ہونا چاہئے ، لیڈر ایسے نہیں ہوتے جو اپنے رشتے داروں کو اہم عہدوں سے نوازیں ، کرپٹ لیڈر سے بڑا کوئی عذاب نہیں ہوتا۔

جہلم میں القادر یونیورسٹی کی مرکزی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ جس معاشرے میں کرپشن کو برا ہی نہ سمجھا جائے وہاں کون محنت کرے گا ، جب کرپشن کو برا نہیں سمجھا جائے گا تومعاشرہ تباہ ہو جائے گا،  لاہور میں ہونیوالے سیمینار میں  سپریم کورٹ کے ججز بلائے گئے ، اسی سیمینار میں ایسے شخص کو بھی مدعو کیا گیا جو ملک و قوم کا پیسہ چوری کر کے بھاگا ہوا ہے ، ایسے شخص کو چیف گیسٹ بلایا گیا جو سزا یافتہ ہے ، جب چوروں کو برا نہیں سمجھیں گے تو یہ سب سے بڑی برائی ہے ۔

وزیر اعظم نے کہا کہ ایک وقت تھا جب ہمارا ملک تیزی سے ترقی کی منازل طے کر رہا تھا ، پھر اس پر زوال آنا شروع ہو گیا ، میں واحد شخص ہوں جسے سیاست میں آنے سے پہلے بھی دنیا جانتی تھی ورنہ جو بھی یہاں سیاست میں آیا اسے کوئی جانتا نہ تھا ، سیاست میں آنے کے بعد انہوں نے عمارتیں کھڑی کر لیں ۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ ملک میں ایک انگریزی میڈیم سکول تھے تو ایک اردو میڈیم تیسرا دینی مدارس کا نظام تھا اور یہ تینوں ہی  ایک دوسرے سے یکسر مختلف تھے جس کے باعث تینوں طبقات کی اپنی اپنی سوچ تھی ، ہم نے سب سے پہلے تو تعلیمی نصاب کو یکساں کیا ہے تاکہ ہم آہنگی پیدا ہو ۔

انہوں نے کہا کہ اسلام کے خلاف کوئی بات ہو تو سب سے پہلے اور بھرپور  رد عمل پاکستان سے آتا ہے ، یہاں سب سے زیادہ عاشقان رسول ﷺ رہتے ہیں ، یہ سب سے زیادہ زکوٰۃ و خیرات دینے والا ملک ہے ، مگر بد قسمتی سے سیرت نبیﷺ  سے کوئی تعلق ہے ۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -