گندم پیداوار میں اضافہ ہماری پہلی ترجیح، حسین جہانیاں 

گندم پیداوار میں اضافہ ہماری پہلی ترجیح، حسین جہانیاں 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


رحیم یار خان(بیورو رپورٹ)خواجہ فرید یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ انفارمیشن ٹیکنالوجی میں عظیم الشان کسان میلہ سجایا گیا جس میں علاقے بھر کے کسان، ماہرین زراعت اور شہریوں کی کثیر تعداد شریک ہوئی۔ میلے کا افتتاح صوبائی وزیر زراعت  حسین جہانیاں گردیزی، وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر محمد سلیمان طاہر اور ڈی جی ذراعت ڈاکٹر انجم نے کیا۔ کسان(بقیہ نمبر1صفحہ6پر)
 میلے کا انعقاد خواجہ فرید یونیورسٹی نے محکمہ زراعت، فاطمہ فرٹیلائزر اور دیگر تعاون سے کیا تھا۔ اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر ذراعت حسین جہانیاں گردیزی کا کہنا تھا کہ حکومت ذراعت، خصوصا گندم کی پیداوار میں اضافے پر بھرپور توجہ دے رہی ہے۔ ہماری کوشش ہے کہ گندم کی پیداوار کو اس حد تک لے جائیں کہ کسی دوسرے ملک سے نہ منگوانی پڑے۔ انہوں نے کہا  خواجہ فرید یونیورسٹی کا یہ اقدام قابل تعریف ہے۔ اس سے علاقائی کسانوں کو اگاہی ملے گی۔ وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر محمد سلیمان طاہر کا کہنا تھا کہ خواجہ فرید یونیورسٹی تمام شعبہ ہائے زندگی میں اپنے حصے کی شمع جلانے کا مشن جاری رکھے گی۔ انہوں نے کہا یہ شاندار پروگرام جہاں کسانوں کو تربیت دے رہا ہے وہیں انہیں جدید آلات کا استعمال سکھا نے کا سبب بنا ہے۔ اس سے کسانوں کے ساتھ طلبہ خصوصا ذراعت کے طالب علموں کو بہت کچھ سیکھنے کو ملا ہے۔ اس تقریب سے جدید زراعت کو فروغ ملے گا جس سے پیداوار بڑھے گی اور ملک پر زرمبادلہ کا بوجھ کم ہوگا۔ قبل ازیں وائس چانسلر نے صوبائی وزیر اور دیگر اعلی حکام کو یونیورسٹی کی حالیہ کامیابیوں پر ایک مختصر بریفنگ بھی دی جس پر معزز مہمانوں نے ان کی پوری ٹیم کی کاوشوں کو سراہا۔ میلے میں طلبہ اور مختلف کمپنیوں نے پچاس سے زائد سٹالز لگائے جن پر ٹریکٹرز، جدید تھریشرز، ہارویسٹرز،  زرعی آلات، زرعی تحقیقات پر مبنی کتابچے، مختلف اجناس کے بیج اور کیڑے مار ادویات وغیرہ نمائش کے لیئے رکھی گئی تھیں۔ صوبائی وزیر زراعت حسین جہانیاں گردیزی نے پروفیسر ڈاکٹر محمد سلیمان طاہر کے ہمراہ مختلف سٹالز کا دورہ کیا اور جامعہ کے انتظامات کی تعریف کی۔ اس دوران مقامی کھاد کمپنیوں کی جانب سے کسان کنونشن کا بھی انعقاد کیا گیا تھا جس میں سیکڑوں کسان شریک ہوئے۔ شرکا کو ذراعت میں جدت، جدید طریقہ کاشت پر تفصیلی بریفنگ دی گئی۔ اس حوالے سے شرکا کا کہنا تھا کہ اس پروگرام سے انہیں بہت کچھ سیکھنے کو ملا۔صوبائی وزیر نے یونیورسٹی میں حال ہی میں مکمل ہونے والے منصوبوں کا بھی دورہ کیا۔ انہوں نے سپورٹس کمپلیکس، ٹیچنگ بلاک، گیسٹ ہاس اور ایگزیکٹو کیفے جیسے منصوبوں پر پسندیدگی کا اظہار کیا۔ اس موقع رجسٹرار ڈاکٹر محمد صغیر، ڈین پروفیسر ڈاکٹر محمد شہزاد مرتضی، ایگری کلچر انجینئرنگ کے سربراہ ڈاکٹر یاسر نیاز، ڈی ایس اے ڈاکٹر محمد اسلم خان، ڈاکٹر ثمینہ ثروت، ڈاکٹر عدنان نور، ڈاکٹر ثقلین، ڈاکٹر عدنان بودلہ، ڈاکٹر سعید اقبال، جمشید خالد سمیت مختلف کمپنیوں کے نمائندگان، فیکلٹی ممبران اور انتظامی افسران بھی موجود تھے۔