عوام ک سہولت، آرمز لائسنس پالیسی کو سہل بنایا جائے: بابر سواتی 

عوام ک سہولت، آرمز لائسنس پالیسی کو سہل بنایا جائے: بابر سواتی 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


        پشاور(سٹی رپورٹر) وزیراعلی کے مشیر برائے محکمہ داخلہ و قبائلی امور بابر سلیم سواتی نے کہا ہے کہ عوام کو زیادہ سے زیادہ فیسیلٹیٹ کرنے کے لئے آرمز لائسنس پالیسی کو ریویو کیا جائے تاکہ آرمز لائسنس کے حصول کو شفاف آسان اور سہل بنایا جائے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے محکمہ داخلہ و قبائلی امور میں آرمز لائسنس پالیسی کے حوالے سے جائزہ اجلاس کی صدارت کر رہے تھے۔ اجلاس میں سپشل سیکرٹری محکمہ داخلہ، ڈپٹی سیکرٹری ایڈمینسٹریشن محکمہ داخلہ ودیگر حکام نے شرکت کی، اجلاس کو بریفنگ دیتے ہوئے بتایا گیا کہ خیبرپختونخوا میں کل رجسٹرڈ ارمز ڈیلرز کی تعداد 1555 ہیں، مینوفیکچرنگ یونٹس کی تعداد 348 ہے جبکہ ممنوعہ بور مینوفیکچر ڈیلرز کی تعداد 79 ہے۔ مشیر داخلہ نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ عوام کی سہولت کیلئے آرمز لائسنس پالیسی کو مزید جامع اور سہل بنایا جائے۔ انہوں نے کہا ہے کہ غیر ممنوعہ بور لائسنس ضلعی یا ڈویژنل کوٹہ سسٹم کے بجائے ضرورت کے مطابق جاری کئے جائیں، تاکہ اضلاع یا ڈویژن کی سطح پر لائسنس کوٹہ کی وجہ سے زیر التوا کیسز کا اجرائجلد از جلد ممکن بنایا جاسکے۔بابر سلیم سواتی نے مزید کہا ہیکہ عوامی سہولت کے لئے، ارمز لائسنس کے اجراء اور طریقہ کار کو شفاف اور آسان بنایا جائے۔ انہوں نے کہا ہے کہ آرمز لائسنس سیکشن کو سنٹرالائز کیا جارہاہے جس سے لائسنس کے اجراء کو مزید شفاف بنانے میں مدد ملے گی۔ ان کا کہنا تھا کہ ون ونڈو سیٹزن فیسیلٹیشن نظام پر پیش رفت جاری ہے، جس کا اجراء جلد کیا جار ہا ہے، جس سے عوام مستفید ہونگے۔انہوں نے عوامی سہولیات کو مدنظر رکھتے ہوئے، عام آدمی کو زیادہ سے زیادہ فیسیلٹیٹ کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہمارا مینڈیٹ عوام کی حقیقی معنوں میں خدمت کرنی ہے، ہم عوامی نمائندے ہیں اور عوام کی خدمت اپنی اولین ترجیح سمجھتے ہیں۔