عمران خان کے بعد بیرسٹر گوہر انٹر ا پارٹی الیکشن میں چیئرمین کے امیدوار ہوں گے 

عمران خان کے بعد بیرسٹر گوہر انٹر ا پارٹی الیکشن میں چیئرمین کے امیدوار ہوں ...
عمران خان کے بعد بیرسٹر گوہر انٹر ا پارٹی الیکشن میں چیئرمین کے امیدوار ہوں گے 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )تحریک انصاف کے رہنما بیرسٹر علی ظفرنے دو دسمبر کو انٹرا پارٹی انتخابات کا اعلان کر دیا ہے جس میں عمران خان حصہ نہیں لے رہے جس کی وجہ سے وہ چیئرمین بھی نہیں رہیں گے ایسی صورت میں عبوری چیئرمین کا اعلان کر دیا گیا ہے جو کہ عمران خان کے قریبی’ بیرسٹر گوہر ‘ہوں گے ۔
پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے بیرسٹر علی ظفر کا کہناتھا کہ شیر افضل مروت نے کل جو کچھ کہا وہ درست بات تھی ، ہمارا نظریہ وہی ہے جو چیئرمین عمران خان کا ہے ، وہی پارٹی کا اول اور آخر نظریہ ہے ، جو بھی ان کے بعد چیئرمین ہوگا وہ عارضی ہو گا، مستقل لیڈر عمران خان ہی ہوں گے، بیرسٹر گوہر انٹرا پارٹی الیکشن میں چیئرمین پی ٹی آئی کے امیدوار ہوں گے یہ کوئی مائنس ون فارمولانہیں ہے ، کسی قد آور شخصیت کو چیئرمین بناتے تو مائنس ون کی بات ہوتی ، عمران خان کے بغیر تحریک انصاف کا کوئی تصور نہیں ہے ۔
 انہوں نے کہا کہ ہم ہفتے کو انٹر ا پارٹی الیکشن کروانے جارہے ہیں ،انٹر اپارٹی الیکشن لڑنے سے متعلق عمران خان سے مشاورت کی گئی ہے ، چیئرمین پی ٹی آئی کے خلاف صرف توشہ خانہ کیس میں فیصلہ ہواہے ،توشہ خانہ کیس میں سزا ماتحت عدلیہ نے سنائی جو غیر آئینی ہے ،توشہ خانہ کیس میں جو الزام لگایا گیا اس پر نااہلی نہیں ہو سکتی ،چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان نے انٹر پارٹی الیکشن کروانے کی منظوری دیدی ہے ،انہوں نے کہا ہے کہ الیکشن کمیشن کو کوئی بہانہ نہیں دینا چاہتا ،انہوں نے کہا کہ وہ خطرہ مول نہیں لے سکتے کہ ہمیں بلے کا نشان نہ ملے ،یہ کوئی مائنس ون فارمولا نہیں ہے ،