دورہ بھارت میں مسئلہ کشمیر سے متعلق اقوام متحدہ کی قرارداروں پر بات ہو گی: برطانوی وزیراعظم

دورہ بھارت میں مسئلہ کشمیر سے متعلق اقوام متحدہ کی قرارداروں پر بات ہو گی: ...

لندن(اے این این) برطانیہ کی خاتون وزیر اعظم تھریسا مے نے 6نومبر کو اپنے دورہ بھارت کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس دورے کے دوران بھارت کے ساتھ مسئلہ کشمیر سے متعلق اقوام متحدہ کی قرار دادوں پر بات ہوگی تاہم کشمیر کے دیرینہ تنازعہ پر ہمارے موقف میں کوئی تبدیلی نہیں آئی یہ مسئلہ پاکستان اور بھارت مل کر حل کریں ۔وہ برطانوی پارلیمنٹ میں لیبر پارٹی کی پاکستانی نژاد رکن یاسمین قریشی کے سوالوں کا جواب دے رہی تھیں ۔تھریسا مے نے کہا کہ کہ کشمیر پر ہمارے موقف میں کوئی تبدیلی نہیں آئی ہے کیونکہ یہ ایک باہمی مسلہ ہے جسے بھارت اور پاکستان کو مل کر حل کرنا ہے۔ یاسمین قریشی نے پوچھا تھا کہ کیا برطانیہ کی وزیر اعظم دورہ بھارت کے دوران مسئلہ کشمیر پر بھارتی قیادت سے بات کریں گی ۔ برطانوی خاتون وزیر اعظم نے کہا میں وہی رائے اختیار کررہی ہوں جو میری حکومت کی رہی ہے اور جو بیشک پہلے بھی رہی ہے،وہ یہ کہ کشمیر کا معاملہ بھارت اور پاکستان کے درمیان مسلہ ہے جو ان دونوں کو خود حل کرنا چاہیے۔یاسمین قریشی نے ایک اور سوال کیا کہ 1948کی اقوام متحدہ قراردادوں پر عمل نہیں ہوا ہے اور یہ کہ برطانیہ کو اس میں اپنا رول ادا کرنا چاہیے۔اس پر برطانوی وزیر اعظم نے کہا وزیر خارجہ نے مذکورہ ممبر کی درخواست دیکھ لی ہے اور یقیناًہم بھارت سے ان معاملات پر بات کریں گے۔برطانوی وزیر اعظم 6نومبر سے نئی دلی کا دورہ کررہی ہیں۔

مزید : صفحہ آخر