شرمیلا فاروقی کو سرکاری عہدے کے لئے نااہل قرار دینے کی کارروائی

شرمیلا فاروقی کو سرکاری عہدے کے لئے نااہل قرار دینے کی کارروائی
شرمیلا فاروقی کو سرکاری عہدے کے لئے نااہل قرار دینے کی کارروائی

  

کراچی (این این آئی)سندھ ہائی کورٹ میں شرمیلا فاروقی کو سرکاری عہدے کے لئے نااہل قرار دینے کی کاروائی سے متعلق جمعہ کوکیس کی سماعت ہوئی۔شرمیلا فاروقی کے وکیل نے جواب الجواب داخل کرانے کے لئے عدالت سے مہلت مانگ لی۔

سندھ ہائی کورٹ کے جسٹس نعمت اللہ پھلپوٹو کی سربراہی میں بینچ نے شرمیلا فاروقی کو نااہل قرار دینے کی کاروائی سے معتلق کیس کی سماعت کی۔عدالت میں نیب کی جانب سے جواب میں بتایا گیا ہے کہ شرمیلا فاروقی سزایافتہ ہیں اور کوئی سرکاری عہدہ نہیں رکھ سکتیں نیب قانون کے مطابق کارروائی کرہا ہے عدالت سے استدعا ہے کہ درخواست مسترد کی جائے۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

شرمیلا فاروقی نے پلی بارگینگ کے زریعے رقم لوٹائی اور مارچ 2000میں پلی بارگینگ کی نیب کی جانب سے آرٹیکل 15 کے تحت سندھ حکومت کو شرمیلا فاروقی کے خلاف کارروائی کرنے کے لیے خط بھی لکھا ہے جس پر عدالت میں سابق وزیر ثقافت شرمیلا فاروقی کے وکیل نے جواب الجواب داخل کرانے کے لیئے عدالت سے مہلت مانگ لی عدالت نے کیس کی مزید سماعت 23 نومبر تک ملتوی کردی۔

مزید : کراچی