عمرا ن کے رشتے سے انکار کیا توبیہودہ میسج آنا شروع ہوئے ،گلا لئی

عمرا ن کے رشتے سے انکار کیا توبیہودہ میسج آنا شروع ہوئے ،گلا لئی

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) تحریک انصاف کی منحرف رہنما عائشہ گلا لئی نے کہاہے کہ جب میں نے چیئر مین پی ٹی آئی عمران خان کے رشتے سے انکار کیا تو مجھے بے ہودہ میسجز آنا شروع ہوگئی تھے۔ مجھے عمران خان نے بلیک بیری موبائل رکھنے کا کہا لیکن میں نے انکار کردیا۔ نجی ٹی وی دنیا نیوز کے پروگرام ’’ سوال عوام کا‘‘ میں گفتگو کرتے ہوئے عائشہ گلا لئی کا کہناتھا کہ جب میرے پارٹی کے ساتھ اختلافات شروع ہوئے تو مجھے طالبان نے فون کر کے جان سے مارنے کی دھمکیاں دینا شروع کردیں اور مجھ سے پیسوں کا تقاضابھی کیا گیا جبکہ اس بات کی ایف آئی آر میں نے کاؤنٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ میں جمع کروا دی ہے اور یہ واقعہ میری پریس کانفرنس کرنے سے کچھ وقت پہلے کا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مجھے سمجھ نہیں آتی کہ عمران خا ن کے جلسوں میں گانے چلتے ہیں ،ریلیوں دھرنوں کے دوران بھی ناچ گانا ہوتا ہے وہاں پر ایک پٹاخہ تک کیوں نہیں چلتا۔ عمران خان جذباتی انسان ہیں کبھی وہ پی ٹی پر حملہ کردیتے ہیں اور کبھی خواتین کے خلاف نازیبا زبان استعمال کرتے ہیں جیسا کہ میری بہن کے خلاف سوشل میڈیا پر کیا گیا لیکن بعد وہ مکر جاتے ہیں کہ میں نے کچھ نہیں کیا۔عائشہ گلا لئی کا مزید کہناتھا کہ ہماری فوج جس طرح ملک و قوم کے لئے دہشتگردی کیخلاف مثبت کردار ادا کررہی ہے ہمیں اس کردار کو سراہنا چاہیے کیونکہ اس فوج میں ہمارے بیٹے بھائی ہیں لیکن عمران خان کبھی فوج کے خلاف بات کرتے ہیں اورکبھی کہتے ہیں کہ فوج میرے ساتھ ہے۔لیکن میں سمجھتی ہوں کہ فوج کسی ایک کی نہیں ہے فوج سب کی ہے۔

عائشہ گلالئی

مزید : صفحہ اول

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...