عمران خان نومبر میں پی ٹی آئی کی ٹیکس پالیسی کا اعلان کریں گے

عمران خان نومبر میں پی ٹی آئی کی ٹیکس پالیسی کا اعلان کریں گے

لاہور (کامرس رپورٹر) تحریک انصاف کے مرکزی رہنما، قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے صنعت و پیداوار کے چیئرمین اسد عمر نے کہا ہے کہ عمران خان نومبر میں پی ٹی آئی کی ٹیکس پالیسی کا اعلان کریں گے ،موجودہ حکومت کا اقتصادی ماڈل ناکام ہو گیا ہے ،وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار ساڑھے چار سال میں ملک کی معیشت کو کوئی فائدہ نہیں پہنچا سکے ،ان کی ناکامی کے بعد حکومت نیا کل وقتی وزیر خزانہ لائے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز اپٹما عہدیداروں کے ساتھ اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کے دوران کیا ،اس موقع پراپٹما کے گروپ لیڈر اعجاز گوہر اور دیگر بھی موجود تھے۔ اسد عمر نے کہا کہ موجودہ حکومت نے دعویٰ کیا تھاکہ پاکستان کو ایشیاء کا ٹائیگر بنا ئے گی جس میں وہ مکمل طور پر ناکام رہی ہے ۔ اس وقت معاشی بحران ہمارے سر پر آ چکا ہے اورملک کے قرضے سے تیزی سے بڑھ رہے ہیں، اس سال ہمارا معاشی خسارہ 5ارب ڈالر تک پہنچ چکا ہے ۔ ملک میں ہر سال لاکھوں نوکریاں درکار ہیں اور نوجوانوں کو روزگار نہیں مل رہا ۔ فیصل آباد میں ٹیکسٹائل انڈسٹری مالکان اپنا کاروبار فروخت کر رہے ہیں۔مسلم لیگ (ن) کا ترقی کا ماڈل مکمل طو رپر فیل ہو چکا ہے جبکہ ان کی مصروفیات کافی بڑھ چکی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ شاہد خاقان عباسی کو معیشت بہتر بنانے کے لئے کام کرنا چاہیے ۔ ملک میں معاشی ایمر جنسی لگانے کی ضرورت ہے ۔ اپٹما کے گروپ لیڈر اعجاز گوہر نے کہا کہ اب بھی وقت ہے کہ حکومت ٹیکسٹائل سیکٹر کی طرف توجہ مرکوز کرے کیونکہ اس سے پورے ملک کا مفاد وابستہ ہے۔ انہوں نے کہا اگر حکومت ہمارا ساتھ دے تو ہم اندرونی خسارے کو پورا کر سکتے ہیں ۔ ہمارا واضح مطالبہ ہے کہ پورے ملک میں بجلی اور گیس کے نرخ یکساں مقرر کئے جائیں ۔

ٹیکس پالیسی

مزید : صفحہ آخر