اسلامائزیشن کے لئے سب سے زیادہ کام ہماری حکومت نے کیا:اسد قیصر

اسلامائزیشن کے لئے سب سے زیادہ کام ہماری حکومت نے کیا:اسد قیصر

صوابی (بیورورپورٹ ) سپیکر خیبرپختونخوا اسمبلی اسدقیصر نے کہا ہے صوبائی حکومت نے مساجد کے آئمہ کرام کے لئے تنخواہ مقرر کرنے کا جو فیصلہ کیا ہے اس پر ضرور عمل کرے گی ،صوبے میں اسلامائزیشن کے لئے سب سے زیادہ کام ہماری حکومت نے کی جبکہ ایم ایم اے دور میں اسلام کی کوئی خدمت نہیں کی گئی ،ہفتہ کی شام دارالقرآن پنج پیر میں جماعت اشاعت التوحید والسنت کے سالانہ سہ روزہ تربیتی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے اسدقیصر نے کہا کہ ہم امریکہ یا کسی اور کے سامنے سر جھکانے کے بجائے صرف اپنے اللہ تعالیٰ کے حضور میں سجدہ کرتے ہیں ،ہم کسی کی غلامی نہیں مانتے اپنے ملک پاکستان کو خودمختار اور آزاد چاہتے ہیں ،جہاں ہماری خارجہ پالیسی آزاد ہو کیونکہ پاکستان ایک نظریے اور عقیدے کے تحت بنا ہوا ہے اس لئے ہم اپنے ملک میں نظام شریعت کا نفاذ چاہتے ہیں ،انہوں نے وفاق سے ایک بار پھر مطالبہ کیا کہ 1973 کے آئین پاکستان کے تحت پورے فاٹا کو خیبرپختونخوا میں ضم کرکے اسے تمام حقوق دئیے جائیں ،ایف سی آر جیسے کالا قانون کے نفاذ سے وہاں سرکاری سکولز، ہسپتالز ،روڈز اور دیگر سہولیات قبائلی عوام کو میسر نہیں ،انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت صوبہ بھر میں چار ہزار مساجد میں سولر سسٹم لگائیں گے ،اسی طرح ہماری ہی حکومت نے سرکاری سکولوں میں ناظرہ قرآن و ترجمہ قرآن شروع کیا ہے ، پہلی بار صوبے میں حضرت عمرؓ کی شہادت پر سرکاری تعطیل کا اعلان کیا ،عقیدہ ختم نبوتؐ کو تعلیمی نصاب کا حصہ بنایا گیا ،سود کے خلاف قانون سازی کی ،جس کے تحت سودی کاروبار کرنے والوں کے خلاف پرچہ ہونے پر دس سال قید اور پانچ لاکھ روپے جرمانہ ہوگا ،اسی طرح سود کے معاملے میں جرگہ اور سفارش کرنے والوں پر بھی ایسا قانون نافذ ہوگا ،صوبے میں پرچہ ہونے پر سودخوروں کو گرفتار کیا گیا ہے جبکہ عوام بھی ان سود خوروں کے ساتھ سوشل بائیکاٹ کریں ،انہوں نے کہا کہ عقیدہ توحید کا مثالی قیادت صوابی میں موجود ہیں ،ساری دنیا میں یہاں سے تبلیغ پہلی ہوئی ہے ،انہوں نے کہا کہ مولانا محمد طاہر مرحوم نے تفسیر قرآن اور توحید و سنت کے حوالے سے بیداری کی جو تحری چلائی ہے اس کی بدولت آج خطے میں ترجمہ کے ساتھ قرآنی دروس کا سلسلہ جاری ہے ۔

 

مزید : پشاورصفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...