شبقدر ،سود خور اور غنڈہ گرد کی جان سے مارنے اور حملہ کی دھمکیاں

شبقدر ،سود خور اور غنڈہ گرد کی جان سے مارنے اور حملہ کی دھمکیاں

شبقدر( نمائندہ خصوصی)سود خور اور غنڈہ گرد جان سے مارنے اور گھر پر حملہ کرنے کی دھمکیاں دے رہا ہے ،ایک ہفتہ پہلے بھی سو د خوروں نے مسلح افراد کے ہمراہ میرے گھر پر دھاوا بول دیا ایک درجن سے زیادہ مسلح افرادکے ہمراہ میرے حجرے میں گھس آئے میرے چچا زاد بھائیوں پر تشدد کیا ہمارے گھر کو زبردستی خالی کرا دیا گیا مجھے گاؤں والوں کی موجودگی میں اسلحہ کے زور پر زبر دستی اُٹھا کر لے گئے ملک کرامت شاہ ،تفصیلات کے مطابق پی ٹی آئی کے ضلعی رہنماء ملک کرامت شاہ آف شھباز خان کورونہ نے اپنے رشتہ داروں بصویر خان،استخار خان اکرام خان کے ہمراہ اپنے حجرے میں میڈیا کے نمائندوں کو بتایا کہ شبقدر حلیم زئی کے ارشد خان نے میرے بھائی اور رشتہ دار کو ایک چنگ چی رکشہ اور ایک موٹر سائیکل سود پر دیا تھا اور اس رقم پر کچھ مہینے گزر گئے جن کی وجہ سے ارشد خان حلیم زئی نے وہ رقم بڑھا کر 62لاکھ روپے تک پہنچائی ہیں اس میں کئی لاکھ روپے ہم ادا کر چکے ہیں چونکہ یہ رقم سود کا ہے اس لیے وہ ختم ہونے کا نام نہیں لے رہا گزشتہ ہفتے ارشد خان نے عثمان اور دیگر غنڈوں کو جمع کر کے شام چھ بجے کے قریب واقع شہباز خان کورونہ میں میرے گھر اور حجرے میں زبردستی داخل ہو گئے اور اسلحہ کے زور پر پہلے ہمیں یرغمال بنا دیا پھر میرے چچا زاد بھائیوں پر تشدد کیا اور زبر دستی میرے بھائی کے گھر کو خالی کرایا اور گھر کو تالا لگا دیا ملک کرامت شاہ نے کہا کہ سود خوروں نے مجھے اسلحہ کی نوک پر گاؤں والوں کی موجودگی میں حجرے سے اُٹھا لیا اور اپنے ساتھ گاؤں حلیم زئی لے گئے انہوں نے کہا کہ میرے جن رشتہ داروں پر تشدد کیا گیا انہوں نے شبقدر کے مقامی پولیس سٹیشن میں ایف آئی آر درج کرائی جس پر شبقدر پولیس نے بروقت کروائی کرتے ہوئے مجھے بحفا ظت بازیاب کرایا انہوں نے کہا کہ اب یہ سود خور مجھے جان سے مارنے کی دھمکی دے رہے ہیں اور کہتے ہیں کہ اپنا ایف آئی آر واپس لے لوں ورنہ ہم پھر آپ پر حملے کر دینگے انہوں نے پشاور ہائی کورٹ کے چیف جسٹس، وزیر اعلیٰ پرویز خٹک،آئی جی پولیس کے پی کے،ڈی آئی جی مردان ،ڈی پی او چارسدہ اور ڈی سی چارسدہ اور مقامی پولیس کے ڈی ایس پی سے پر زور مطالبہ کیا کہ ان سود خوروں اور بدمعاشوں کے خلاف فوری ایکشن لیں اور مجھے اور میرے خاندان کو تحفظ فراہم کریں بصورت دیگر اپنے اُوپر اور اپنے بچوں پر پٹرول چھڑک کر شبقدر مین باچا خان چوک میں خود سوزی کرونگا

 

مزید : پشاورصفحہ آخر