چارسدہ ،پولیس انسپکٹر ایکسائز اہلکاروں کی فائرنگ سے زخمی

چارسدہ (بیورورپورٹ) چارسدہ پولیس کا انسپکٹر مبینہ طور پر نان کسٹم پیڈ گاڑی سمگل کر تے ہوئے ایکسائز اہلکاروں کی فائرنگ سے شدید زخمی ۔ واقعہ کے حوالے سے تاحال کوئی ایف آئی آر درج نہیں ہو سکی ۔ تفصیلات کے مطابق چارسدہ کے تھانہ مندنی کے حدود میں ایکسائز اہلکاروں نے چارسدہ پولیس کے انسپکٹر شہنشاہ خان کی گاڑی پر اندھادھند فائرنگ کی جس کے نتیجے میں وہ شدید زخمی ہو گئے ۔ واقعہ کے بعد زخمی پولیس انسپکٹر کو ڈی ایچ کیو ہسپتال چارسدہ منتقل کیا گیا مگر تشویش ناک حالت کے پیش نظر ان کو فوری طور پر لیڈی ریڈنگ ہسپتال پشاور منتقل کیا گیا ۔ذرائع کے مطابق انسپکٹر شہنشاہ خان علی الصبح چھ بجے کے قریب سفید پار چات پہنے ایکس ایل آئی گاڑی LO037 میں سوار تھے کہ مندنی کے علاقہ کو چیانوں کلے کے قریب ایکسائز اہلکار وں نے نان کسٹم پیڈ گاڑی کے شک پولیس انسپکٹر کو گاڑی روکنے کا اشارہ دیا مگرپولیس انسپکٹر نے گاڑی بھگا دی جس پر ایکسائز اہلکاروں نے گاڑی پر فائرنگ شروع کی جس کے نتیجے میں انسپکٹر شہنشاہ خان زخمی ہو گئے ۔پولیس انسپکٹر پر قاتلانہ حملے اور ملزمان کی گرفتاری کے حوالے سے ڈی پی او چارسدہ سہیل خالد نے بتا یا کہ ایکسائز اہلکاروں کا موقف ہے کہ گاڑی نان کسٹم پیڈ ہے جو ملاکنڈ سمگل کی جا رہی تھی ۔ فی الحال اس حوالے سے چارسدہ پولیس نے اعلی حکام کو مراسلہ ارسال کیا ہے جبکہ ایکسائز ٹیم نے بھی اپنے محکمہ کو مراسلہ ارسال کیا ہے ۔تاحال دونوں طرف سے کوئی ایف آئی آر درج نہیں کی گئی ۔ ڈی پی او کے مطابق پولیس انسپکٹر شہنشاہ خان کے بیان کی روشنی اور مکمل تفتیش کے بعد قانونی کاروائی کی جائیگی ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...