جوہانسبرگ میں بھی بھارتی قونصلیٹ کے باہر کشمیریوں کا احتجاجی مظاہرہ 

جوہانسبرگ میں بھی بھارتی قونصلیٹ کے باہر کشمیریوں کا احتجاجی مظاہرہ 

  

جوہانسبرگ(فہیم شبیرسے)جنوبی افریقہ کے شہرجوہانسبرگ میں بھی بھارتی قونصلیٹ کے باہر کشمیریوں نے احتجاجی مظاہرہ کیا جس میں کثیر تعداد میں پاکستانیوں اور کشمیریوں نے شرکت کی، تفصیلات کے مطابق کشمیر میں بھارت کے غاصبانہ قبضے کے خلاف یوم سیاہ کے سلسلے میں پرنس شہبازاور رانا زاہد کی زیر قیادت جوہانسبرگ میں بھی بھارتی قونصلیٹ کے سامنے بڑا احتجاجی مظاہرہ کیا گیا،مظاہرین نے ہاتھوں میں پاکستانی اور کشمیری پر چم کے علاوہ بینرز اور پلے کارڈ بھی پکڑ رکھے تھے جن پر کشمیر یوں کے حق میں اور بھارت کیخلاف نعرے درج تھے جبکہ شر کاء کشمیر بنے گا پاکستان،بھارت کشمیر یوں کیخلاف دہشت گردی بند کرو اور کشمیریوں کے سفیر عمران خان کے نعرے لگاتے رہے،مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے پرنس شہباز نے کہا کہ دنیا کو مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کانوٹس لینا چاہئے کشمیری کئی دہائیوں نے بھارت کا ظلم سہ رہے ہیں،آخر دنیا کا ضمیر کب جاگے گا،؟کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے اور دنیا کی کوئی طاقت ہمیں کشمیر یوں سے ایک لمحہ کو بھی جدا نہیں کرسکتی۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کی تمام سیاسی اور مذہبی جماعتوں سمیت 22کروڑ پاکستانی اپنے کشمیری بہن بھائیوں کیساتھ ہیں اور کشمیر کی آزادی کیلئے کسی بھی قر بانی سے دریغ نہیں کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ بھارت کیخلاف ٹی 20ورلڈ کپ میں پاکستان کی کامیابی پر کشمیر یوں کا جشن بھارت کیخلاف کسی ریفر نڈم سے کم نہیں،رانا زاہد نے کہا کشمیری جس بہادری کے ساتھ بھارتی ظلم اور ناانصافی کے خلاف جد وجہد کر رہے ہیں ایسے حوصلے کی کوئی اور مثال نہیں ملتی۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کا بچہ بچہ اپنے کشمیری بہن بھائیوں کیساتھ ہے اور کشمیر کی آزادی کے لیے کسی قر بانی سے دریغ نہیں کیا جائے گا۔

جوہانسبرگ/ مظاہرہ

مزید :

صفحہ آخر -