سند ھ کے بلدیاتی اداروں کاڈھانچہ تبدیل ،نوٹیفکشن جاری

سند ھ کے بلدیاتی اداروں کاڈھانچہ تبدیل ،نوٹیفکشن جاری
سند ھ کے بلدیاتی اداروں کاڈھانچہ تبدیل ،نوٹیفکشن جاری

  

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) محکمہ بلدیات نے نئے بلدیاتی آرڈیننس کے 21روز بعد صوبے میں بلدیاتی اداروں کی ازسرنو تشکیل کا نوٹیفکیشن جاری کردیا ہے۔ حکومتی ذرائع کے مطابق اب ان اداروں میں سرکاری افسران کو ایڈمنسٹریٹر مقرر کیا جائے گا جن کے نوٹیفکیشن بھی جلد متوقع ہیں۔ بلدیاتی اداروں کی ازسرنو تشکیل کے جاری نوٹیفیکشن کے مطابق میٹروپولیٹن میں اب چیف آفیسر اور ڈسٹرکٹ کونسل میں چیف میونسپل آفیسر تعینات کیے جائیں گے۔ واضح رہے کہ سات ستمبر کو گورنر سندھ کی جانب سے پیپلزمیٹروپولیٹن آرڈیننس 2012ءجاری کیا گیا تھا۔ اس کے مطابق حیدرآباد، کراچی، میرپورخاص، سکھر اور لاڑکانہ میٹروپولیٹن کا درجہ دیا گیا تھا باقی اٹھارہ اضلاع کو ڈسٹرکٹ کونسل کا درجہ دیا گیا۔ آرڈیننس کے مطابق میٹروپولیٹن کے پاس سول ڈیفنس، کمیونٹی ڈیلولپمنٹ، فشریز، سوشل ویلفیئر، اسپورٹس، کلچرل ،کوآپریٹو ڈیپارٹمنٹ کے کچھ فنکشنز ہونگے اسی طرح بلدیاتی اداروں کے ماتحت پرائمری سکول اور ٹیکنیکل ایجوکیشن ،بلدیاتی اداروں کا فنانسڈیپارٹمنٹ،بلدیاتی اداروں کو بجٹ بنانے کا اختیار، بلدیاتی ہسپتال، کے ایم سی ، کے ڈی اے لینڈ ، پراپرٹی ٹیکس ، ہاو¿سنگ ، ڈسٹرکٹ روڈاور بلڈنگ ضلعی حکومتوں کا حصہ ہونگی۔ میٹروپولیٹن کارپوریشن کے ماتحت ماسٹر شہر کا ماسٹرپلان ، اربن پلاننگ ، بلدیاتی حدود میں لینڈ یوز کنٹرول اینڈ لینڈ مینجمنٹ ،اینٹی انکروچمنٹ کی گئی ہیں ۔مسودہ کے مطابق پانی کی فراہمی ، سٹوریج اور تقسیم ، ٹریٹمنٹ پلانٹ، سیوریج نظام ،ہیومن ریسورس مینجمنٹ ، لٹریسی کمپین، انفارمیشن ٹیکنالوجی ، پبلک ٹرانسپورٹ، ماس ٹرانزٹ پیسنجر ،ٹریفک پلاننگ ،پارکس پلے گراو¿نڈ ، ریجنل مارکیٹ ، کمرشل سینٹر ز ہوگی ۔

مزید :

کراچی -