ٹارگٹ کلنگ اور دیگر پرتشدد واقعات میں 4 افراد زندگی کی بازی ہار گئے

ٹارگٹ کلنگ اور دیگر پرتشدد واقعات میں 4 افراد زندگی کی بازی ہار گئے
ٹارگٹ کلنگ اور دیگر پرتشدد واقعات میں 4 افراد زندگی کی بازی ہار گئے

  

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک ) حکومتی دعوﺅں اور پولیس و رینجرز کی کارروائیوں کے باوجود شہر قائد میں ٹارگٹ کلنگ کا سلسلہ تھمنے کا نام نہیں لے رہا ہے اور تازہ ترین واقعات میں 4 افراد اپنی زندگی کی بازی ہار گئے۔

تفصیلات کے مطابق شہر قائد میں فیڈرل بی ایریا کے علاقے سمن آباد میں مسلح ملزمان نے نمکو سینٹر کے قریب گلی میں موجود افراد پر گھات لگاکر جدید آٹو میٹک ہتھیاروں سے فائرنگ کردی اور فرارہوگئے۔گولیاں لگنے سے 3 افراد زخمی ہوگئے جن کی شناخت ذیشان،فیصل اور ثاقب کے ناموں سے ہوئی ، اطراف کی دکانوں کے شٹرز اور گلی میں موجود کئی گاڑیوں پر بھی گولیاں لگیں۔فائرنگ کے واقعے میں زخمیوں کو طبی امداد کے لئے عباسی شہید ہسپتال منتقل کیا گیاتاہم دو زخمی ذیشان اور ثاقب زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسے،جاں بحق ہونے والے دونوں افراد آپس میں کزن ہیں اور مقامی صحافی کے بھانجے ہیں ،جائے وقوعہ سے نائن ایم ایم پستول کی گولیوں کے خول ملے ہیں واقعے کی مزید تفتیش کی جارہی ہے۔فائرنگ کے واقعے کے بعد علاقے میں خوف وہراس پھیل گیا اور رات گئے دیر تک کھلے رہنے والی دکانیں بھی بند ہوگئیں۔

ماڑی پور میں بھی ٹارگٹ کلرز نے فائرنگ کرکے ایک شخص کو ہلاک کردیا جس کی لاش سول ہسپتال منتقل کردی گئی، بلدیہ میں اتحاد ٹاﺅن سے نوجوان کی لاش ملی ہے۔ اس کے علاوہ ناظم آباد 2 نمبر میں بھی فائرنگ سے ایک شخص زخمی ہوگیا جسے عباسی ہسپتال میں طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔

مزید : کراچی