چارٹر آف ڈیموکریسی لندن پلان نہیں تھا: قمر الزمان کائرہ

چارٹر آف ڈیموکریسی لندن پلان نہیں تھا: قمر الزمان کائرہ
چارٹر آف ڈیموکریسی لندن پلان نہیں تھا: قمر الزمان کائرہ

  

 کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک )پیپلزپارٹی کے رہنما قمر زمان کائرہ نے کہا ہے کہ عمران خان حقائق کو مسخ کررہے ہیں، میثاق جمہوریت پر چھپ کر نہیں ،دن کی روشنی میں دستخط ہوئے ،وہ اس لندن اور امریکہ کی مثالیں دیتے ہیں جہاں دو ، دو پارٹیاں ہی اقتدار میں آرہی ہیں۔شہر قائد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے پیپلزپارٹی کے رہنما قمر زمان کائرہ نے کئی باتوں کو حقائق کے برعکس قرار دیتے ہوئے انہیں درست تناظر میں بیان کرنے پر زو ر دیا۔ قمر زمان نے کہا کہ چارٹر آف ڈیموکریسی ، لندن پلان نہیں تھا،پلان چھپ کر طے ہوتے ہیں ،آمریت کے مخالف میثاق جمہوریت پر ساری دنیا کے سامنے دستخط ہوئے۔عمران خان کی جانب سے برطانیہ اور امریکی جمہوریت کی مثال کو غلط قرار دیتے ہوئے قمرزمان کائرہ نے کہا کہ ان ممالک میں تو دو ،دو پارٹیاں ہی اقتدار میں آرہی ہیں، پاکستان میں آمریت کی باری ختم ہونے چاہیے۔قمر زمان کائرہ نے عمران خان کے اس بیان کا بھی جواب دیا کہ جمہوریت عوام کے مسائل حل اس وقت کرے گی جب اسے مستحکم ہونے دیا جائے گا، ملک میں جمہوریت صرف ساڑھے دس سال رہی اور اسی عرصے میں ملک میں ترقی ہوئی جبکہ آمریت نے مسائل کو جنم دیا۔سابق وفاقی وزیر نے جمہوری حکومت کا ساتھ دینے والی جماعتوں اور پارلیمنٹ کے اتحاد کا دفاع کیا اور کہا کہ عمران خان کی واحد حلیف جماعت اسلامی بھی ان کے ساتھ نہیں ہے ۔

مزید : کراچی