چینی ارب پتی نے اپنے ملک کے بارے میں ایسی بات کہہ دی کہ سن کر آپ بھی شدید پریشان ہوجائیں گے

چینی ارب پتی نے اپنے ملک کے بارے میں ایسی بات کہہ دی کہ سن کر آپ بھی شدید ...
چینی ارب پتی نے اپنے ملک کے بارے میں ایسی بات کہہ دی کہ سن کر آپ بھی شدید پریشان ہوجائیں گے

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

بیجنگ (نیوز ڈیسک) گزشتہ سال چین کی سٹاک مارکیٹ میں آنے والے بحران نے لاکھوں افراد کو کنگال کردیا، اور اب چین کے امیر ترین آدمی اور مشہور کاروباری شخصیت وانگ جیانلن نے رئیل اسٹیٹ کے شعبے میں بھی ایک بڑے بحران کے خطرے سے خبردار کردیا ہے، جس کا نتیجہ نہ صرف چینی معیشت کے لئے بہت برا ہو گا بلکہ عالمی معیشت پر بھی اس کے اثرات ہوں گے۔
امریکی ٹی وی سی این این کو دئیے گئے خصوصی انٹرنیٹ میں وانگ جیانلن کا کہنا تھا کہ ”چینی ریئل اسٹیٹ مارکیٹ تاریخ کا سب سے بڑا بلبلا ہے جو کہ کسی بھی وقت تحلیل ہوسکتا ہے“ اور اس کے نتیجے میں بہت بڑا معاشی بحران پیدا ہوسکتا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ چین کے بڑے شہروں میں جائیداد کی قیمتیں تیزی سے بڑھ رہی ہیں جبکہ اس کے برعکس چھوٹے شہروں میں قیمتیں گررہی ہیں اور بڑی تعداد میں ایسی جائیدادیں پڑی ہیں جنہیں کوئی پوچھنے والا نہیں۔

برطانیہ میں مسلمانوں کو بدنام کرنے کے لئے اس شخص نے ایسی حرکت کر ڈالی کہ جان کر آپ کو بھی شدید غصہ آئے گا
وانگ جیانلن کا کہنا تھا کہ حکومت کے پاس اس مسئلے کا فوری طور پر کوئی اچھا حل نظر نہیں آتا۔ ان کا کہنا تھا کہ ریئل اسٹیٹ کی مارکیٹ میں لوگوں نے بھاری رقوم لگائی ہوئی ہیں اور اگر یہ صورتحال جاری رہی تو ایک بڑے بحران کی صورت اختیار کرجائے گی۔ انہوں نے یہ بھی بتایا کہ ریئل اسٹیٹ کے شعبے میں سرمایہ کاری کرنے والے کاروباری افراد اور ادارے مجموعی طور پر 3.6 کھرب ڈالر (تقریباً 360 کھرب روپے )کے مقروض ہیں، اور اس شعبے میں بحران کی وجہ سے یہ سب دیوالیہ ہو جائیں گے۔ وانگ جیانلن اس سے پہلے بھی پراپرٹی کے شعبے میں بحران کے آثار کی بات کرچکے ہیں اور معاشی تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ پراپرٹی کے شعبے کا وسیع تجربہ رکھنے والے وانگ کی بات کو سنجیدگی سے سننے کی ضرورت ہے۔