فیس بک پر مسلمان تنظیم کا سوشل میڈیا اکاﺅنٹ، دن رات سیاست پر تبصرے، لیکن پھر سکیورٹی اداروں نے سراغ لگایا تو دراصل کون یہ پیج چلارہا تھا؟ جان کر دنیا بھر کے مسلمان شدید پریشان ہوجائیں گے، کوئی شدت پسند تنظیم نہ تھی بلکہ۔۔۔

فیس بک پر مسلمان تنظیم کا سوشل میڈیا اکاﺅنٹ، دن رات سیاست پر تبصرے، لیکن پھر ...
فیس بک پر مسلمان تنظیم کا سوشل میڈیا اکاﺅنٹ، دن رات سیاست پر تبصرے، لیکن پھر سکیورٹی اداروں نے سراغ لگایا تو دراصل کون یہ پیج چلارہا تھا؟ جان کر دنیا بھر کے مسلمان شدید پریشان ہوجائیں گے، کوئی شدت پسند تنظیم نہ تھی بلکہ۔۔۔

  

واشنگٹن(مانیٹرنگ ڈیسک) گزشتہ سال امریکی الیکشن سے قبل ایک مسلم تنظیم کے نام سے منسوب سوشل میڈیا اکاﺅنٹ نے خوب ہلچل برپا کئے رکھی۔ انتہائی متنازع دعوے کر کے پورے امریکا میں ہنگامہ کھڑا کرنے والے اس فیس بک گروپ کے بارے میں ہر کوئی سمجھ رہا تھا کہ یہ امریکی مسلمانوں کی کسی تنظیم نے قائم کیا ہے، لیکن اب یہ حیرت انگیز انکشاف ہوا کہ اس کا کسی بھی مسلمان سے دور دور کا واسطہ نہیں بلکہ یہ اکاﺅنٹ روس کی کوئی خفیہ تنظیم چلا رہی تھی۔

ڈیلی بیسٹ کی رپورٹ کے مطابق ’یونائیٹڈ مسلمز آف امریکہ‘ نامی گروپ کے 2لاکھ 68ہزار فالوورز ہیں۔ اس گروپ کی جانب سے گزشتہ سال امریکی الیکشن سے قبل یہ دعویٰ کیا گیا تھا کہ صدارتی امیدوار ہیلری کلنٹن نے القاعدہ اور داعش کو بنانے کیلئے فنڈ اور ہتھیار فراہم کئے تھے۔ اسی طرح سینیٹر جان مکین کے داعش کو بنانے میں کردار اور اسامہ بن لادن کے امریکی خفیہ ایجنسی سی آئی اے کے ساتھ تعلقات کے بارے میں دعوے بھی اسی گروپ پر سامنے آئے تھے۔

’کسی بھی رات ہم اس ملک پر حملہ کردیں گے‘ ترک صدر طیب اردگان نے اچانک تہلکہ خیز اعلان کردیا، دنیا کو خبردار کردیا

تحقیق کاروں کا کہنا ہے کہ اس گروپ پر اکثر مثبت نوعیت کے مذہبی پیغامات جاری کئے جاتے تھے لیکن کبھی کبھار ان پیغامات کے درمیان جھوٹی خبریں بھی پوسٹ کی جاتی تھیں۔ یہ گروپ بظاہر ہیلری کلنٹن کی حمایت کا تاثر بھی دیتا رہا لیکن درحقیقت ایسی جھوٹی خبریں شائع کرتا تھا جو ہیلری کلنٹن کے خلاف جاتی تھیں۔ ٹویٹر پر بھی اس کا اکاﺅنٹ تھا جبکہ انسٹاگرام پر بھی اس کے 71ہزار فالوورز تھے۔ امریکی ایجنسیاں اس معاملے کی مزید تحقیقات جاری رکھے ہوئے ہیں۔

مزید :

بین الاقوامی -