پاکستان دہشتگردی کیخلاف جنگ اپنی بقا نہیں دنیا کے امن کیلئے لڑرہا ہے:رفیق رجوانہ

پاکستان دہشتگردی کیخلاف جنگ اپنی بقا نہیں دنیا کے امن کیلئے لڑرہا ہے:رفیق ...

  

لاہور( نمائندہ خصوصی،ایجوکیشن رپورٹر )گورنر پنجاب ملک رفیق رجوانہ نے کہا ہے کہ دنیا کو دہشت گردی کیخلاف جنگ میں پاکستان کی قربانیوں کو تسلیم کرنا اور اس ناسور کے خاتمے کیلئے ہمارا پورا ساتھ دینا ہو گا ۔ پاکستان نے دہشت گردی کی جنگ محض اپنی بقاء کیلئے نہیں بلکہ پوری دنیا کے امن کو محفوظ رکھنے کیلئے لڑی اور اب تک لڑ رہا ہے ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے گورنرہاؤس میں ملاقات کر نیو ا لے جرمن سفیرمسٹر مارٹن کابلر سے گفتگو میں کیا ،انکا مزید کہنا تھا پاکستان جرمنی کے ساتھ اپنے تعلقات کو قدر کی نگاہ سے دیکھتا ہے اور دونوں ملکوں کے درمیان مختلف شعبوں میں بڑھتا ہوا تعاون ہمارے گہرے تعلقات کا ثبوت ہے ۔پاکستان جرمنی کے ساتھ شعبہ تجارت و صنعت میں دو طر فہ تعاون کو نئی بلندیوں تک پہنچانے کا خواہاں ہے، اس سلسلے میں دونوں ممالک کے تاجروں کے روابط کو فروغ دینا ہوگا۔ تعلیم کے شعبے میں بھی جرمنی کا پاکستان سے تعاون قابل تعریف ہے اور اس وقت پاکستانی طلباء کی بڑی تعداد جرمنی میں زیر تعلیم ہے ۔ انجینئرنگ کی تعلیم میں پاکستان جرمنی کی صلاحیتوں سے استفادہ کر رہا ہے۔اس موقع پر جرمن سفیر مسٹر مارٹن کابلرکا کہنا تھا جرمنی پاکستان کے تعلقات باہمی احترام اور دو طرفہ تعاون سے عبارت ہیں اور ان تعلقات کو مزید فروغ دینے کیلئے نئے شعبوں کا انتخاب کیا جائے گا۔ جرمنی پاکستان کی دہشت گردی کے حوالے سے بے مثل قربانیوں کو انتہائی قدر کی نگاہ سے دیکھتا ہے۔بعد ازاں مقامی ہوٹل میں ہاےئرایجوکیشن کمیشن کے زیر اہتمام علامہ محمد اقبال سکالرشپ پروگرام کے تحت تین ہزار افغانی طلبہ کو سکالرشپ دینے کی تقریب سے خطاب میں گورنر پنجاب ملک رفیق رجوانہ نے کہا مستحکم افغانستان مضبوط پاکستان کی ضمانت ہے۔ پاکستان اور افغانستان محبت اور یگانگت کے ایسے رشتوں میں جڑے ہوئے ہیں جو کبھی نہیں ٹوٹ سکتے اورافغان طلبہ کا پاکستان میں سکالرشپ حاصل کرنا اس بات کا واضح ثبوت ہے ۔ عمل کے بغیرعلم لا حاصل ہے جو قومیں اپنے علم کو مقصدیت کے تحت عمل میں لائیں آج دنیا پر راج کررہی ہیں۔ موجودہ حکومت مربوط حکمت عملی کے تحت دوست ملکوں سے باہمی شراکت داری کو فروغ دے رہی ہے ۔ایچ ای سی کی افغانی طلبہ میں سکالرشپ کی تقسیم اسی وژن کا عملی نمونہ ہے۔تعلیم و تربیت کے ذریعے انسانی وسائل کی ترقی پر خرچ کیا جانیوالا پیسہ ہی بہترین سرمایہ کاری ہے۔ گورنر پنجاب نے سکالرشپ حاصل کرنیوالے طلبا و طالبات کو مبارکباد دی اور کہا طلبہ نے ثابت کردیا کہ خواب اگرسچے ہوں تو ان کو تعبیر مل ہی جاتی ہے۔ تقریب سے افغان سفیر عمر زاخل وال،افغان ایڈوائزر ایجوکیشن منسٹر امان اللہ فقیری، افغانستان میں پاکستان کے سفیر زاہد نصر اللہ خان اور چیئرمین ایچ ای سی پروفیسر ڈاکٹر مختار احمد نے بھی خطاب کیا۔ اس موقع پر سکالرشپ ہولڈرافغان طلبہ نے بھی خیالات کا اظہا ر کیا اور کہا پاکستان میں انھوں نے نہ صرف بین الاقوامی معیار کی تعلیم حاصل کی بلکہ پاکستانی کلچر سے بھی متعارف ہونے کا موقع ملا۔

رفیق رجوانہ

مزید :

علاقائی -