انڈیکس 72.72 پوائنٹس کے اضافے سے 42362.87 پوائنٹس پر بند

انڈیکس 72.72 پوائنٹس کے اضافے سے 42362.87 پوائنٹس پر بند

  

کراچی (اے پی پی) پاکستان اسٹاک ایکسچینج (پی ایس ایکس) میں تیزی کا رجحان رہا، کے ایس ای 100 انڈیکس 72.72 پوائنٹس کے اضافے سے 42362.87 پوائنٹس پر بند ہوا، مارکیٹ سرمایہ میں 17 ارب 60 کروڑ 2 لاکھ 20 ہزار 614 روپے کا اضافہ ہوگیا جبکہ تجارتی حجم میں بھی 62 کروڑ 87 لاکھ 86 ہزار 42 روپے کی تیزی رہی تاہم خرید و فروخت میں 63 لاکھ 92 ہزار 680 حصص کی مندی ریکارڈ کی گئی۔ تفصیلات کے مطابق کاروباری ہفتے کے چوتھے روز جمعرات کو پی ایس ایکس میں تیزی کا رجحان رہا اور کے ایس ای 100 انڈیکس 42300 پوائنٹس کی بالائی نفسیاتی حد عبور کرتے ہوئے 72.72 پوائنٹس کے اضافے سے 42362.87 پوائنٹس پر بند ہوا جبکہ کے ایس ای 30 انڈیکس بھی 25.77 پوائنٹس کی تیزی سے 21629.27 پوائنٹس پر بند ہوا۔ مارکیٹ میں اتار چڑھاؤ کے بعد کے ایس سی آل شیئر انڈیکس میں 78.83 پوائنٹس کا اضافہ رونماء ہوا جبکہ کے ایم آئی 30 انڈیکس میں 106.02 پوائنٹس کی تیزی ریکارڈ کی گئی۔ دریں اثناء بینکس ٹریڈ ایبل (بی اے ٹی آئی) انڈیکس 57.44 پوائنٹس کی کمی سے 15792.71 پوائنٹس پر بند ہوا تاہم آئل اینڈ گیس ٹریڈ ایبل (او جی ٹی آئی) انڈیکس 208.29 پوائنٹس کے اضافے سے 17721.76 پوائنٹس پر بند ہوا۔

حصص کی خرید و فروخت میں تیزی کی وجہ سے پی ایس ایکس - کے ایم آئی انڈیکس 73.28 پوائنٹس کی تیزی سے 21246.89 پوائنٹس پر بند ہوا۔ مارکیٹ میں مجموعی طور پر 382 کمپنیوں کے حصص کا لین دین ہوا جن میں سے 234 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں تیزی، 127 کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں مندی اور 21 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا۔ سب سے زیادہ تیزی رفحان میز پروڈکٹس کے حصص کی قیمت میں ہوئی جو 193 روپے کے اضافے سے 7299 روپے پر بند ہوئی۔ اسی طرح نیسلے پاکستان کے حصص کی سودے بھی 99.51 روپے کی تیزی سے 12999.50 روپے پر بند ہوئے۔ سب سے زیادہ مندی باٹا (پاک) اور مری پیٹرولیم ایکس ڈی کے حصص کی قیمتوں میں ہوئی۔ باٹا (پاک) کے حصص کی قیمت 50 روپے کی مندی سے 2900 روپے اور مری پیٹرولیم ایکس ڈی کے حصص کی قیمت بھی 25.18 روپے کی کمی سے 1501.32 روپے رہ گئی۔ سب سے زیادہ کاروبار بینک آف پنجاب کے حصص میں ہوا جو 1 کروڑ 23 لاکھ 9 ہزار شیئرز رہا جس کی قیمت 9.25 روپے سے شروع ہو کر 9.60 روپے پر بند ہوئی جبکہ کوہ نور اسپیننگ کے 1 کروڑ 3 لاکھ 95 ہزار 500 حصص کے سودے 6.15 روپے سے شروع ہو کر 6.30 روپے بند ہوئے۔ مجموعی طور پر 14 کروڑ 3 لاکھ 99 ہزار 230 حصص کا کاروبار ہوا جس کا تجارتی حجم 6 ارب 4 کروڑ 46 لاکھ 72 ہزار 567 روپے رہا۔ مارکیٹ کیپیٹل 88 کھرب 8 ارب 89 کروڑ 6 لاکھ 77 ہزار 964 روپے سے بڑھ کر 88 کھرب 26 ارب 49 کروڑ 8 لاکھ 98 ہزار 578 روپے ہو گیا۔ فیوچر ٹریڈنگ میں 145 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں تیزی، 14 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں مندی اور 1 کمپنی کے حصص کی قیمت میں استحکام رہا جبکہ 9 کروڑ 45 لاکھ 5 ہزار 575 حصص کا کاروبار ہوا۔

مزید :

کامرس -