لندن صوفی کانفرنس کی مخالفت سمجھ سے بالاتر ہے،قاسم سراج سومرو

لندن صوفی کانفرنس کی مخالفت سمجھ سے بالاتر ہے،قاسم سراج سومرو

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر) پاکستان پیپلزپارٹی کلچر ل ونگ سندھ کے صدر قاسم سراج سومرو نے کہا ہے کہ صوفی ازم کو فروغ اور اس کو عالمی سطح پر متعارف کرانے کے لیے 7اکتوبر کو لندن میں صوفی کلچرل کانفرنس کرانے کافیصلہ کیا ہے ۔لندن صوفی کانفرنس کی مخالفت سمجھ سے بالاتر ہے ۔ہم پر منی لانڈرنگ کا الزام لگانے والے صوفی ازم کے خلاف سازش کررہے ہیں وہ خود ہی اس میں ناکام ہوجائیں گے ۔بلاول بھٹو زرداری کا اس کانفرنس میں شرکت کا کوئی پروگرام نہیں تھا ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعرات کو سندھ اسمبلی بلڈنگ میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔قاسم سراج سومرو نے کہا کہ پاکستان میں دہشتگردی کے تاثر کو دنیا میں ختم کرنے کیلئے صوفی کلچرل کانفرنس کا لندن میں اہتمام کیا گیا ہے جس پر کم سے رقم خرچ کی جائے گی ۔کانفرنس کے انعقاد پر 80کروڑ روپے خرچ کرنے کا الزام لگانے والے اس کا ثبوت دیں ۔صوفی فیسٹول صرف لندن میں ہی نہیں دنیا کے دیگر ممالک میں بھی منعقد کیا جائے گا ۔پیپلزپارٹی محکمہ ثقافت سندھ کے اس عمل کی بھرپور حمایت کرتی ہے ۔پیپلز پارٹی کلچرل ونگ کے صدر نے میڈیا کے کچھ حلقوں اور سوشل میڈیا پر چلنے والی مہم کو مسترد کرتے ہوئے کہا کے ہم پر منی لانڈرنگ کے الزام لگانے والے صوفی ازم کے خلاف سازش کررہے ہیں وہ خود ہی ناکام ہو جائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ سوشل میڈیا پر جاری دعوت نامہ غلط تھا۔اس صوفی کانفرنس میں صرف 23فنکار لندن جائیں گے ۔پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کا شروع سے اس پروگرام میں جانے کا کوئی پروگرام نہیں تھا ۔قاسم سومرو نے کہا کہ ہم طالبان سے مذاکرات شروع کرنے کے عمل بھی مذمت کرتے ہیں ۔واضح رہے کہ صوفی کانفرنس میں ملک بھر سے 23 صوفی آرٹسٹ شرکت کریں گے جس کیلئے محکمہ ثقافت سندھ نے انتظامات کو بھی حتمی شکل دے دی ہے۔

مزید :

کراچی صفحہ آخر -