سندھ کےتعلیمی اداروں میں ابتک کورونا کےکتنےکیسز سامنے آئے؟سعید غنی نے تشویش ناک انکشاف کردیا 

سندھ کےتعلیمی اداروں میں ابتک کورونا کےکتنےکیسز سامنے آئے؟سعید غنی نے تشویش ...
سندھ کےتعلیمی اداروں میں ابتک کورونا کےکتنےکیسز سامنے آئے؟سعید غنی نے تشویش ناک انکشاف کردیا 

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن)سندھ کے وزیر تعلیم سعید غنی کا کہنا ہے کہ سندھ بھر کے  تعلیمی اداروں میں اب تک کورونا کے 56 ہزار 299 ٹیسٹ کروائے گئے ہیں، جن میں سے 40150کے نتائج موصول ہوچکے ہیں، کورونا وائرس کے کروائے گئےٹیسٹوں  میں سے اب تک 0.75 فیصد مثبت کیسز سامنے آئے ہیںتاہم اب بھی 15 ہزار 846 کے نتائج آنا باقی ہیں

نجی ٹی وی کے مطابق نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی)کے اجلاس میں سعید غنی نے کہا کہ صوبے میں تعلیمی اداروں کو کھولنے کے بعد صورتحال بہت حد تک بہتر ہوئی ہے، اب تک نجی اور سرکاری سکولز میں 56 ہزار 299 ٹیسٹ کروائے گئے ہیں، جن میں سے 40150کے نتائج موصول ہوچکے ہیں تاہم اب بھی15ہزار846 کے نتائج آنا باقی ہیں۔انہوں نے بتایا کہ سرکاری سکولز میں 40ہزار 414میں سے 27ہزار 933کے نتائج سامنے آئے ہیں جن میں سے217مثبت کیسز ہیں جبکہ نجی سکولز کے15ہزار885ٹیسٹ میں سے12ہزار217کیسز کےنتائج آچکے ہیں جن میں سے86میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی ہے،مجموعی طور پر اب تک 303مثبت کیسز سامنے آئے ہیں جو 0.75فیصد بنتے ہیں۔

سعید غنی کا کہنا تھا کہ اس وقت صوبے میں کورونا کے حوالے سے تعلیمی اداروں میں ایس او پیز پر عملدرآمد اطمینان بخش ہے اور مجموعی طور پر تعلیمی اداروں میں صورتحال بہتر ہے،مجھ سمیت سیکریٹری اور دیگر افسران روزانہ کی بنیادوں پر سرکاری اور نجی تعلیمی اداروں کا دورہ کررہے ہیں اور صورتحال کی نگرانی کر رہے ہیں ۔صوبائی وزیر تعلیم کا کہنا تھا کہ ہماری زیادہ سے زیادہ توجہ والدین کو اس حوالے سے آگاہی کی فراہمی ہے،ہم نے والدین سے کہا ہے کہ وہ خود بھی سکولوں میں جائیں اور خود سکولز اور کلاس رومز کا وزٹ کریں،ہم نےوالدین کو یہ بھی ہدایات دی ہیں کہ جہاںتک ممکن ہو اپنے بچوں کو سکول یا پبلک ٹرانسپورٹ کی بجائے خود لینے جائیں اور سکول چھوڑیں۔

مزید :

کورونا وائرس -