شوکت خانم ہسپتال پر کرپشن کے الزامات، عدالت نےن لیگی رہنما حنیف عباسی کو زور دار جھٹکا لگا دیا 

شوکت خانم ہسپتال پر کرپشن کے الزامات، عدالت نےن لیگی رہنما حنیف عباسی کو زور ...
شوکت خانم ہسپتال پر کرپشن کے الزامات، عدالت نےن لیگی رہنما حنیف عباسی کو زور دار جھٹکا لگا دیا 

  

 راولپنڈی(ڈیلی پاکستان آن لائن) شوکت خانم کینسر میموریل ہسپتال کا مسلم لیگ (ن) کے رہنما حنیف عباسی کے خلاف ہرجانے کا دعویٰ منظور کرتے ہوئے زور دار فیصلہ سنا دیا ہے۔

نجی ٹی وی کے مطابق راولپنڈی کی مقامی عدالت نے شوکت خانم ہسپتال ہرجانہ کیس کا فیصلہ سناتے ہوئے نون  لیگی رہنما اور سابق رکن قومی اسمبلی  حنیف عباسی کو 50 لاکھ روپے ہرجانہ ادا کرنے کا حکم دے دیا ہے۔ ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج صاحبزادہ نقیب شہزاد نے کیس کا فیصلہ سنایا تاہم مسلم لیگی رہنما حنیف عباسی فیصلہ سننے عدالت نہ آئے۔عدالت نے شوکت خانم میموریل کینسر ہسپتال انتظامیہ  کے خلاف حنیف عباسی کے تمام الزامات کو مسترد کردیا۔ مسلم لیگی رہنما نے شوکت خانم ہسپتال انتظامیہ پر کئی سال قبل سنگین کرپشن کے الزامات لگائے تھے لیکن ان الزامات کو وہ ثابت نہ کرسکے۔ہسپتال انتظامیہ نے  2012 میں حنیف عباسی پر 10 ارب روپے کے ہرجانہ کا مقدمہ دائر کرتے ہوئے ان الزامات کو ہسپتال کی ساکھ خراب کرنے کی کوشش قرار دیا تھا۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -راولپنڈی -