والد کے ہاتھوں قتل ہونے والی لڑکی کی لاش ورثاءکے حوالے

والد کے ہاتھوں قتل ہونے والی لڑکی کی لاش ورثاءکے حوالے

  



لاہور(کر ائم سیل)نشتر کالونی کے علاقے میں والد کے ہاتھوں قتل ہونے والی22سالہ لڑکی کی لاش پولیس نے پوسٹمارٹم کے بعد اسکے ورثاءکے حوالے کردی۔ پولیس تاحال بیٹی کو قتل کرنے والے ملزم کو گرفتار نہیں کرسکی۔ پولیس کے مطابق ملزم نے غیرت کے نام پر بیٹی کو قتل کیا ہے ملزم کی تلاش میں مختلف مقامات پر چھاپے مارے جا رہے ہیں جسکو جلد گرفتار کرلیا جائے گا۔ یاد رہے کہ نشتر کالونی کے نواحی گاﺅں دولم سٹاپ کے رہائشی رشید کو اپنی بیٹی شاہدہ کے چال چلن پر شبہ تھا کہ اس کے کسی محلے دار سے تعلقات ہیں جس پر اس نے اپنی بیٹی کو ان حرکات سے متعدد بار منع کیا مگر وہ بازنہ آئی ایک روزقبل رشید کی بیٹی شاہدہ گھر سے باہر جانے لگی تو اس کے والد نے اسے منع کیا اس دوران ان دونوں میں تلخ کلامی ہو گئی جس پر رشید نے طیش میں آ کر تیز دھار آلہ سے اپنی بیٹی کی شہ رگ کاٹ دی اور فرار ہو گیا۔

مزید : علاقائی


loading...