تعلیمی بورڈ کو انٹرمیڈیٹ کے سالانہ امتحانات میں فرائض سر انجام دینے والے عملے کی کمی کا سامنا

تعلیمی بورڈ کو انٹرمیڈیٹ کے سالانہ امتحانات میں فرائض سر انجام دینے والے ...

  



                                           لاہور(ایجوکیشن رپورٹر( صوبہ بھر کے تعلیمی بورڈز کو انٹرمیڈیٹ کے سالانہ امتحانات میں فرائض سرانجام دینے والے عملے کی کمی کا سامنا،سالانہ امتحانات میں انتظامی امور متاثر ہونے کا خدشہ۔ذرائع کے مطابق امتحانی عملے کو بروقت معاوضے کی عدم ادائیگی کے باعث محکمہ تعلیم کے ملازمین ڈیوٹی دینے سے کتراتے ہیں جبکہ دوسری طرف صوبہ بھر کے 9تعلیمی بورڈز میںآج سے شروع ہونیوالے ایف اے /ایف ایس سی کے امتحانات کےلئے تعینات کئے گئے 50فےصد امتحانی عملہ کوضلعی تعلیمی افسران نے ڈیوٹی کےلئے ریلیو کرنے سے انکار کردیا ہے،جبکہ بورڈز کو پہلے ہی 30فےصد سٹاف کی شدید کمی کا سامنا ہے،جس سے وزیر اعلی پنجاب کی طرف سے صوبہ بھر میںایف اے/ایف ایس سی کے امتحانات شفاف اور منظم طریقے سے منعقد کروانے کامنصوبہ کھٹائی میں پڑ گیا۔محکمہ تعلیم پنجاب کے ذرائع کے مطابق چیئرمین انٹر بورڈز کمےٹی نے اس سلسلے میںسیکرٹری سکولز پنجاب کوایف اے /ایف ایس سی کےلئے درکار سٹاف کی ہنگامی بنیادوں پر فراہمی کےلئے خط بھی لکھ دیاہے۔ذرائع کے مطابق اس وقت لاہور ،گوجرانوالہ،بہاولپور،ڈی جی خان،ملتان،سرگودھا،فیصل آباد،راولپنڈی اور ساہیوال میں560 سپرنٹنڈنٹ /ڈپٹی سپرنٹنڈنٹ سمیت مرد وخواتین امتحانی عملہ کی کمی کا سامنا ہے،جبکہ ڈیوٹی کلرکوں نے بھی ای ڈی اوز کی طرف سے ڈیوٹی کےلئے ریلیو نہ کرنے کی شکایت کی ہے۔انہوںنے بتایا کہ 9تعلیمی بورڈز میں ایف اے /ایف ایس سی کے شفاف امتحانات کے انعقاد کےلئے بورڈز نے تمام متعلقہ سٹاف کو حاضر ہونے کے احکامات دئیے ہیں لیکن 50فےصدمردوخواتین اساتذہ نے ڈسٹرکٹ اےجوکےشن آفےسرز کی طرف سے ڈیوٹی کےلئے ریلیو نہ کرنے کی شکایت کی ہے۔بورڈ کے اعلی حکام کیطرف سے اس سلسلے میں ایک ہنگامی اجلاس منعقد کیا گیا ہے،جہاں9تعلیمی بورڈ کے چیئرمینز نے سیکرٹری سکولز کو خط لکھنے کی تجویز دی گئی ہے،جس کے بعد چیئرمین انٹر بورڈز کمےٹی نے سیکرٹری سکولز پنجاب کو خط ارسال کردیا ہے۔ذرائع کے مطابق سیکرٹری سکولز کو لکھے گئے خط میں بورڈز حکام کی طرف سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ تمام اضلاع کے ایگزیکٹو ڈسٹرکٹ اےجوکےشن آفےسرز(ای ڈی اوز)کو ایف اے /ایف سی کےلئے امتحانی عملہ فراہم کرنے کی درخواست کی گئی ہے،جبکہ بورڈزنے متبادل کے طور پر پرائیویٹ تعلیمی اداروں کے مردوخواتین اساتذہ کو ایف اے /ایف ایس سی کے امتحانات میں ڈیوٹی کےلئے فوری طور پر تعینات کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ذرائع نے مزید بتایا ہے کہ بورڈز کی موجودہ صورت حال کے پaےش نظر ایف اے /ایف ایس سی کے امتحانات کی شفافیت پر سوالیہ نشان لگ گیا ہے،جبکہ وزیر اعلی پنجاب کا شفاف امتحانات کے انعقاد کا ویثرن بھی خطرے میں پڑ گیا ہے۔

مزید : صفحہ آخر