دنیا کا زہریلا ترین سانپ

دنیا کا زہریلا ترین سانپ
دنیا کا زہریلا ترین سانپ

  



برزبین(بیورو رپوٹ)آپ نے اکثر مختلف اقسام کے زہریلے سانپوں کے بارے میں توسن رکھا ہوگا لیکن کیا آپ کو معلوم ہے کہ دنیا کا زہریلاترین سانپ کو نسا ہے؟دنیا کا زہریلا ترین سانپ”انلینڈتائپان“کومانا جاتا ہے۔اسے”مغربی تائپان‘‘ کے نام سے بھی جانا جا تا ہے اور عموماً یہ آسٹریلیا کے مشرقی و سطی علاقے میں پایا جا تا ہے۔اس کاذکر پرانی کتابوں میں ملتا ہے لیکن حالیہ تاریخ میں اسے 1972ء میں دریافت کیا گیا۔ماہرین کا کہنا ہے کہ یہ سانپ اگر ایک دفعہ کسی شخص کو کاٹ لے تو اس کے منہ سے نکلنے والازہر 100انسانوں کو مارنے کے لئے کافی ہوتا ہے۔اس کے ڈسنے کے بعد اگر زخم کا فوری علاج نہ کیا جائے تو 30منٹ سے 45منٹ میں انسان کی موت ہو سکتی ہے۔یہ انتہائی پھرتیلا اور نشانے کا انتہائی پکا ہوتاہے۔عموماً یہ حملہ نہیں کرتا لیکن اگر خطرہ محسوس کرے تو چوکتا بھی نہیں۔لہذا کہا جا سکتا ہے کہ یہ خطرناک ترین سانپ تو نہیں لیکن زہریلا ترین ضرور ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...