”پاکستان میں کورونا وائرس کا علاج دریافت“

”پاکستان میں کورونا وائرس کا علاج دریافت“

  

جہاں ادارۂ ہمدرد نے دور حاضر میں در پیش وبائی مرض (کورونا وائرس) کے پیش نظر پیدا ہونے والی صورتحال کے تناظر میں سفید پوش گھرانوں میں کورونا ریلیف راشن بیگز تقسیم کئے وہاں ہمدرد کے شعبہ تحقیق نے کورونا وائرس کی بیماری اور اس سے زندگی کو لاحق خطرات کا ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن، امریکی محکمہ صحت اور دیگر تحقیقی اداروں سے حاصل شدہ معلومات کی روشنی میں جائزہ لے کر طب یونانی کے مؤثر طریقہ علاج سے ان کا حل تجویز کیا ہے۔ عوام الناس سے گزارش کی جاتی ہے کہ غیر ضروری مجالس اور سفر سے حتی الامکان گریز کریں، باہر سے آتے ہی صابن سے ہاتھ منہ دھوئیں، شہد اور کلونجی کو روزمرہ غذائی استعمال میں لائیں۔ باہر کے کھانے سے پرہیز کریں، گھر سے نکلتے وقت قلزم ہاتھوں اور ناک پر لگائیں۔ باہر کے کھانے سے پرہیز کریں۔ بالغ افراد ہمدرد انفیوزا دو چائے کے چمچ کے برابر مقدار نیم گرم پانی کیساتھ یا ہمدرد انسٹنٹ جوشاندہ احتیاطی تدابیر کے طور پر رات سوتے وقت پئیں اور اگر کسی کو بخار، کھانسی اور جسمانی درد پایا جائے تو گھبرانے کی ضرورت نہیں یہ فلو کی نشانیاں بھی ہیں لیکن اگر بعد میں سانس لینے میں دشواری، نزلہ اور گلے کی خرابی بھی ظاہر ہو خصوصاً ان افراد میں جو عمر رسیدہ ہوں، امراض قلب، بلڈ پریشر اور شوگر کے مرض میں مبتلا ہوں وہ ان علامات میں فوری طور پر طبی امداد حاصل کریں اور اگر فوری طور پر سہولیات میسر نہ ہوں تو ہمدرد لعوق سپستاں اور شربت صدر کے دو بڑے چمچ صبح و شام لیں اور ہمدرد بام سینہ پر لگائیں۔ مریض کو نیم گرم دودھ، جو کا پانی، ساگودانہ، یخنی اور مونگ کی دال کا پانی دیں اور پانی بھی نیم گرم استعمال کریں جبکہ سوتے وقت ہمدرد خمیرہ ابریشم شیر عناب والا یا خمیرہ ابریشم سادہ ایک چائے کے چمچ کی مساوی مقدار مریضوں کو استعمال کروائے جائیں تو حوصلہ افزاء نتائج آ سکتے ہیں۔ہمارے ادارے ہمدرد کی جانب سے حکومت کو یہ پیشکش بھی کی گئی ہے کہ کورونا سے متاثرہ پچاس مریض ہمارے شفاء خانہ میں بھجوا دیئے جائیں ہم ان کا مکمل علاج کرینگے احتیاطی تدابیر کے ساتھ انہیں تمام سہولیات بھی فراہم کی جائیں گی۔

٭٭٭

مزید :

ایڈیشن 1 -