وزیراعظم نے گرین نگہبان پروگرام کی منظوری دیدی

      وزیراعظم نے گرین نگہبان پروگرام کی منظوری دیدی

  

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں)وزیر اعظم عمران خان اور ایران کے صدر ڈاکٹر حسن روحانی کے درمیان ٹیلی فونک رابطہ ہوا جس میں دونوں رہنماوں نے باہمی تعلقات کے فروغ،کورونا کیخلاف جنگ اور اس پر قابو پانے پر تبادلہ خیال کیا جبکہ وزیراعظم عمران خان نے کہاکہ ایران کیساتھ معاشرتی اور تجارتی تعاون خوش آئند ہے، دونوں ممالک کے درمیان باہمی تجارت پاکستان کی معاشی حالت کو بہتر بنانے میں مدد گار ثابت ہو گا۔ ایرانی سفارتخانے کے مطابق وزیر اعظم عمران خان کا ایرانی صدر ڈاکٹر حسن روحانی سے ٹیلی فونک رابطہ ہوا،ایرانی صدر حسن روحانی نے کہا دونوں ممالک کے درمیان تجربات،علم اور ٹیکنالوجی کے تبادلے کی ضرورت ہے،ایران پاکستان کیساتھ تجارت کے فروغ میں دلچسپی رکھتا ہے اور سرحد کے ذریعے تجارت کے خواہاں ہے،جبکہ ترقی پذیر ممالک کے قرضوں کے حوالے سے وزیر اعظم عمران خان کے ویژن کی حمایت کرتے ہیں۔دونوں رہنماؤں کے مابین کورونا وائرس کی وبائی صورتحال پربھی تفصیلی گفتگو ہوئی،صدر حسن روحانی نے وزیراعظم پاکستان کو رمضان المبارک کی مبارکباد بھی دی۔دونوں ممالک کے علاقوں میں ٹڈی دل کے معاملے پر بھی تفصیلی گفتگو ہوئی۔دریں اثنا کووڈ 19 کے معاملے پر وزیراعظم اور بل گیٹس کے درمیان بھی رابطہ ہوا۔وزیراعظم عمران خان اور مائیکرو سا فٹ کے بانی بل گیٹس کے درمیان ہونیوالی بات چیت میں دنیا بھر میں کورونا وائرس کی صورتحال اور اسکے اثرات پر گفتگو کی گئی۔وزیراعظم عمران خان نے گیٹس فاؤنڈیشن اور عالمی پارٹنرز کی جانب سے مدد کو سراہا اور کہا پاکستان کورونا وبا سے نمٹنے کیلئے مشترکہ کاوش پر مبنی اقدامات کر رہا ہے۔عمران خان نے دوران کہا پاکستان کورونا بیماری کیساتھ غریب طبقے پر اس کے اثرات کا بھی مقابلہ کر رہا ہے۔ اس سلسلے میں مستحقین کی مدد کیلئے حکومت پاکستان نے 8 ارب ڈالر کے امدادی پیکج کا اعلان کیا ہے۔ ان حکومتی اقدامات کی بدولت کورونا وائرس کے پھیلاو روکنے میں مدد ملی ہے۔

وزیراعظم رابطے

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں) وزیر اعظم عمران خان نے گرین نگہبان پروگرام کی منظوری دیدی، منصوبہ چاروں صوبوں میں شروع کیا جائیگا، گرین نگہبان میں کام کرنیوالا یومیہ 800 روپے کما سکے گا، منصوبہ سے 6 لاکھ افراد کو روزگار فراہم کیا جائیگا۔وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت منگل کو وزیر اعظم آفس میں اعلیٰ سطح کا ا جلاس ہوا جس میں وزیراعظم عمران خان نے کورونا کی وبائی صورتحال میں روزگار کیلئے بڑا منصوبہ متعارف کروا دیا۔ گرین نگہبان منصوبے کا افتتاح وزیراعظم عمران خان خود کریں گے۔ گرین نگہبان پروگرام سے کورونا وائرس کی صورتحال میں فوری ملازمتیں اور روزگار کی فراہمی ممکن ہوسکے گی، پروگرام بیک وقت چاروں صوبوں میں شروع کیا جائیگا۔وزیر اعظم نے مشیر موسمیاتی تبدیلی ملک امین اسلم کو منصوبے کی ذمہ داری سونپ دی۔ معلوم ہوا کہ وزیراعظم گرین نگہبان پروگرام کے تحت دسمبر تک 2 لاکھ لوگوں کو نوکریاں فراہم کی جائیں گی جبکہ آئندہ سال مزید 4 لاکھ افراد باعزت روزگار حاصل کرسکیں گے۔ گرین نگہبان پروگرام تین طرح کی ذمہ داریاں ادا کریگا، اس سے شہروں کی صفائی بھی ممکن ہوسکے گی۔ جنگلات، نرسریوں اور پارکس میں گرین نگہبان کی خدمات لی جائیں گی۔ گرین نگہبان پروگرام کے تحت درخت لگائے جائیں گے اور شہروں کو ماحولیاتی آلودگی سے محفوظ بنایا جاسکے گا۔وزیر اعظم نے اجلاس میں ہدایت کی صوبائی حکومتوں، بین الاقوامی اداروں سمیت تمام سٹیک ہولڈرز کو پروگرام کے دائرہ کار میں اضافے اور اضافی ملازمتوں کے موا قع پیدا کرنے کیلئے مصروف عمل ہونا چاہئے۔ دریں اثناء وزیراعظم عمران خان سے ڈاکٹر ثانیہ نشتر اور پی ٹی آئی کے ممبران قومی اسمبلی نے ملاقات کی جس میں کورونا ریلیف فنڈ کی تقسیم پر تبادلہ خیال ہوا۔تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان سے معاون خصوصی برائے سماجی تحفظ اور تخفیف غربت ڈاکٹر ثانیہ نشتر نے ملاقات کی جس میں غریب گھرانوں اور ضرورت مند افراد کے حوالے سے کورونا ریلیف فنڈ کے استعمال کے حوالے سے گفتگو ہوئی۔اس سے پہلے وزیر سیفران صاحبزادہ محبوب سلطان کے ساتھ ممبران قومی اسمبلی غلام بی بی بھروانہ، محمد امیر سلطان، غلام محمد لالی اور ریاض فتیانہ نے بھی وزیراعظم سے ملاقات کی اور احساس پروگرام کے تحت اپنے حلقوں میں شفاف طریقے سے مالی امداد کی تقسیم سے آگاہ کیا۔ممبران نے وزیراعظم سے فیصل آباد اور جھنگ میں سمال انڈسٹریز کو کھولنے کی درخواست کی۔ اس موقع پر وزیراعظم کا کہنا تھا کہ کورونا وائرس کی صورتحال میں عوام کو ریلیف فراہم کرنے کی ہر ممکن کوشش کی جائے۔

گرین نگہبان من

مزید :

صفحہ اول -