کورونا سے دنیا کی 1ارب آبادی متاثر ہو سکتی: انٹر نیشنل آر سی

        کورونا سے دنیا کی 1ارب آبادی متاثر ہو سکتی: انٹر نیشنل آر سی

  

نیویا رک(این این آئی) بین الاقوامی ریسکیو کمیٹی (آئی آر سی) نے خبردار کیا ہے کہ اگر کمزور ممالک کی فوری مدد نہ کی گئی تو دنیا میں ایک ارب افراد کورونا وائرس سے متاثر ہوسکتے ہیں۔میڈیارپورٹس کے مطابق آئی آر سی نے کہا کہ اس وائرس کے عالمی پھیلاؤ کو کم کرنے میں مالی اور انسانی امداد کی ضرورت ہے۔ادارے کے مطابق کمزور ممالک جیسے افغانستان اور شام کو کسی بڑی وبا سے بچنے کے لیے فوری فنڈنگ کی ضرورت ہے۔انہوں نے خبردار کیا کہ ابھی مختصر وقت بچا ہے اور اسی وقت میں مربوط ردعمل کی ضرورت ہے۔عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) اور امپیریل کالج لندن کے ماڈلز اور اعداد و شمار پر مبنی آئی آر سی کی رپورٹ میں پیشگوئی کی گئی کہ عالمی سطح پر 50 کروڑ سے ایک ارب کے درمیان افراد میں وائرس پھیل سکتا ہے۔اس میں یہ بھی کہا گیا کہ تنازعات سے متاثرہ اور غیر مستحکم ممالک کے درجنوں علاقوں میں 30 لاکھ سے زیادہ اموات ہوسکتی ہیں۔اس لیے مخیر ممالک فوری طور پر لچکدار فنڈنگ کریں۔ترقی پذیر دنیا کے بہت سے ممالک میں سرکاری سطح پر انفیکشن کی شرح یا اموات کی تعداد کم بتائی جارہی ہے یقیناً وہاں اصل تعداد اس سے کہیں زیادہ ہے۔یمن میں کووڈ 19 سے صرف ہسپتالوں میں نہیں بباہر بھی مر رہے ہیں۔

ریسکیو کمیٹی

واشنگٹن(این این آئی)ایک تحقیق میں کہاگیا ہے کہ کورونا وائرس کی وجہ سے دنیا کے 7 ارب 10 کروڑ افراد یا 91 فیصد عالمی آبادی وبا کے باعث گھروں میں رہنے پرمجبور ہے۔میڈیارپورٹس کے مطابق کورونا وائرس کی عالمی وبا کے باعث ممالک نے سیاحوں اور بعض اوقات اپنے شہریوں کے لیے بارڈرز بند کردیے ہیں جس کے باعث سرحد پار نقل و حرکت دنیا کے بیشتر حصوں میں تعطل کا شکار ہے۔پیو ریسرچ سینٹر کی تحقیق کے مطابق اس وقت 7 ارب 10 کروڑ افراد ایسے ممالک میں رہائش پذیر ہیں جہاں دیگر ممالک سے آنے والے غیر رہائشیا ور شہریت نہ رکھنے والے افراد کے آنے پر پابندی ہے۔مذکورہ تعداد بشمول سیاحوں، کاروباری مسافر اور نئے تارکین وطن سمیت دنیا کی 91 فیصد آبادی ہے جسے گھر پر رہنے پر مجبور کیا گیا ہے۔اقوام متحدہ اور دیگر ایجنسیوں کی جانب سے فراہم کردہ اعداد و شمار کے مطابق لگ بھگ 3 ارب افراد یا دنیا کی آبادی کا 39 فیصد حصہ ایسے ممالک میں رہائش پذیر ہے جہاں غیر رہائشی یا شہریت نہ رکھنے والے افراد کے لیے سرحدوں کو مکمل طور پر بند کردیا گیا ہے۔مریکہ جہاں کی آبادی لگ بھگ 33 کروڑ ہے نے ان تمام افراد کے لیے بارڈرز بند کردیے ہیں جو امریکی شہری یا رہائشی نہیں اور کورونا وائرس سے زیادہ متاثر ہونے والے ممالک جیسا کہ چین، اٹلی، فرانس، اسپین، برطانیہ اور آئر لینڈ سے آتے ہیں۔

اعدادوشمار

مزید :

صفحہ آخر -