سعودیہ میں پھنسے طلباء کی واپسی کے اقدامات کیے جائیں، ڈاکٹر عامر محمدی

سعودیہ میں پھنسے طلباء کی واپسی کے اقدامات کیے جائیں، ڈاکٹر عامر محمدی

  

کراچی (پ ر)جماعت غرباء اہلحدیث پاکستان کے سیاسی امور کے چیئرمین علامہ ڈاکٹر عامر عبداللہ محمدی نے صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی وزیراعظم عمران خان کی توجہ سعودی عرب میں مقیم پاکستانی طلبہ کی وطن واپسی کے مسئلہ پر مبذول کراتے ہوئے کہا ہے کہ سعودی گورنمنٹ نے دنیا بھر سے آئے طلبہ کو واپس بھیجنے کی اجازت اور واپس جانے کا خرچہ بھی برداشت کرنے کا اعلان کیا ہے،اس کے باوجود ایک ماہ سے سعودی سفیر اور وزارت خارجہ ٹال مٹول سے کام لے رہی ہے۔انہوں نے کہا ہے مختلف غیر مسلم ممالک نے اپنے مسلمان طلباء کو واپس بلالیا ہے لیکن ہمارے پاکستانی طلباء حکومت کی توجہ و نظر کے طالب بنے بیٹھے ہیں۔ڈاکٹر عامر عبداللہ محمدی نے کہا ہے کہ سعودی عرب کی مختلف جامعات میں 488 طلبہ،مدینہ یونیورسٹی میں 360، محمد بن سعود یونیورسٹی میں 52، ملک خالد یونیورسٹی میں 34، جامعہ قاسم میں 18، ام القرای مک یونیورسٹی میں 21 اور جامعہ طیبہ میں 3 طلبہ زیر تعلیم ہیں۔انہوں نے پاکستانی طلباء سے فون پر بات کرتے ہوئے انہیں یقین دلایا کہ حکومت کی توجہ ضرور مبزول کرائیں گے۔دوسری طرف پروفیسر ساجد میر امیر مرکزی جمعیت اہلحدیث نے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کو اس حوالے سے خط بھی لکھا ہ

مزید :

صفحہ آخر -