تھانہ سٹی کبیروالا خودکشی کو قتل ثابت کرنے کیلئے سرگرم،تحریری درخواست پرڈی پی او خانیوال سے رپورٹ طلب

  تھانہ سٹی کبیروالا خودکشی کو قتل ثابت کرنے کیلئے سرگرم،تحریری درخواست ...

  

کبیروالا(تحصیل رپورٹر)پولیس تھانہ سٹی کبیروالا پر ایف آئی آر کی کہانی کے مطابق بیان دلوانے اورحقائق کے مطابق بیان لینے میں لیت ولعل سے کام لینے کے(بقیہ نمبر45صفحہ6پر)

الزامات ہیں متوفیہ کے بھائی کا ریجنل پولیس آفیسر سے صورت حال کا نوٹس لینے اور انصاف فراہم کے لئے تحریری درخواست دیدی،آر پی او ملتان نے ڈی پی او خانیوال سے رپورٹ طلب کرلی۔تفصیل کے مطابق پولیس تھانہ سٹی کبیروالا میں درج مقدمہ نمبر 154/20کے مدعی اور گزشتہ دنوں فائر لگنے سے جاں بحق ہونیوالی متوفیہ فرزانہ بی بی کے بھائی محمد جاوید ولد عبدالرحمن قوم کمبوہ نے ریجنل پولیس آفیسر ملتان کو حصول انصاف کیلئے دی گئی اپنی تحریری درخواست میں موقف کیا ہے کہ اسکی بہن فرزانہ بی بی گھریلو پریشانی کی وجہ سے خود کو فائر مارکر خود کشی کی ہے لیکن پولیس تھانہ سٹی کبیروالا نے ازخود میرا تحریری بیان بناکر میری ہمشیرہ کے دیور ضیاء الحق فاروقی کے خلاف بجرم 302من گھڑت اور جھوٹا مقدمہ درج کرلیا،میں ان پڑھ ہوں اور اس بابت میں نے کوئی تحریر ی درخواست نہیں دی۔درخواست گزار کے بیان کے مطابق پولیس تھانہ سٹی کبیروالا بار بار رابطہ کرنے کے باوجود میرا حقائق کے مطابق بیان زیر دفعہ 161ض ف ریکارڈ کرنے میں مسلسل لیت ولعل سے کام لے رہی ہے اور اس بات پر بضد ہے کہ میں پولیس تھانہ سٹی کبیروالا میں درج مقدمہ نمبر 154/20کی کہانی کے مطابق ہی بیان ریکارڈ کراؤں۔مذکورہ مقدمہ کی کہانی میں بیان کردہ حالات اور واقعات میں کوئی صداقت نہیں ہے بلکہ من گھڑت اور جھوٹ پر مبنی ہیں۔ ریجنل پولیس آفیسرملتان نے درخواست گزار کی تحریری درخواست پر کاروائی کرتے ہوئے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر خانیوال سے رپورٹ طلب کرلی ہے۔علاوہ درخواست گزار کے زیر دفعہ 161ض ف کے مطابق بیان ریکارڈ نہ کرنے کے حوالے سے دائر کردہ رٹ پٹیشن پر متعلقہ مجسٹریٹ نے پولیس تھانہ سٹی کبیروالا کو ریکارڈ سمیت آج طلب کیا ہوا ہے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -